فرضی خبروں پر لگام لگانے کیلئے فیس بک کرنے جا رہا ہے صحافیوں کی بھرتی

Share Article

facebook-all-set-to-hire-jo

سوشل پلیٹ فارم پر فرضی خبروں سے بہتر طریقے سے نمٹنے اور اپنے مواد کو بہتر بنانے کے لئے فیس بک نئی نسل کے ڈیجیٹل صحافیوں اور نیوز پبلشرز کو کام دے سکتا ہے۔ یورپ کی سب سے بڑی پبلشر ایکسل اسپنگر کی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او) میتھیس ڈفانرسے پیر کو بات کرتے ہوئے فیس بک کے سی ای او مارک زکربرگ نے کہا کہ اس پلیٹ فارم پر اپنے دو ارب سالانہ یوزرس کے لئے اور زیادہ ٹاپ کی خبریں کس طرح دی جائے، اس سمت میں قدم اٹھایا جائے گا۔

مارک نے کہا، ’مجھے نہیں پتہ کہ آپ کے حساب سے فیس بک پر کتنے فرضی اکاؤنٹ ہیں، لیکن یہ بہت بڑی تعداد معلوم ہوتی ہے۔ کچھ لوگ کہتے ہیں 70 کروڑ ہیں، مجھے بالکل نہیں پتہ، لیکن اس سے انتہائی سنگین مسئلہ ہے کہ اس سے طرح نمٹنا ہوگا۔‘انہوں نے کہا،’ہمیں کچھ صحافیوں، نامہ نگاروں اور بڑے غیر ملکی نیٹ ورکس کو یہ کام دینا ہوگا اور وہ یہ کام بلا معاوضہ نہیں کریں گے۔‘

زکربرگ نے کہا کہ وہ اس بات کا یقین کرنے پر توجہ دیں گے کہ فیس بک پر سیکڑوں، ہزاروں صحافیوں، بلاگروں، ڈیجیٹل مقامی پبلشرز کو کیا اپنی طرف متوجہ کرتا ہے کہ وہ پلیٹ فارم پر اپنا سب سے بہتر مواد شیئر کرتے ہیں۔ فیس بک کے شریک بانی نے کہا، ’ہم صحافیوں سے خبریں نہیں بنوائیں گے، ہم ان سے صرف اس بات کی یقین دہانی کرانا چاہتے ہیں کہ ہر پروڈکٹ ایسا ہو، جس سے لوگوں کو ٹاپ کی خبریں ملیں۔‘

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *