بیماریاں مندر کے پرشاد میں 

Share Article


مندر میں بہت سے غریب اس مقصد سے جاتے ہیں کہ پرشاد کے نام پر انہیں کچھ کھانے کو مل جائے گا اور امیر اس نیت سے جاتے ہیں کہ پرشاد کھاکر انہیں کچھ روحانی پاکیزگی مل جائے گی۔مندروں میں نہ صرف روحانی بلکہ جسمانی شفا پانے کے عقیدے سے لوگ جاتے ہیں۔مگر کیا کیجئے اس بات کو کہ وہاں بھی کچھ لوگوں کی کوتاہیوں کے سبب پرشاد میں شفا کے بجائے بیماریاں ملتی ہیں۔

کرناٹک کے ایک مندر میں عبادت کے بعد دیا گیا کھانا کھانے سے کئی لوگوں کی حالت غیر ہوگئی جبکہ 11 افراد ہلاک ہو گئے۔زہریلا کھا کھانے والے کم از کم 70 افراد کواسپتال لے جایا گیا ہے۔اس واقعے کے بعد دو افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔یہ زہریلا کھانا چاولوں اور ٹماٹروں سے بنا کھانا پیش کیا گیا تھامندر میں ایک خصوصی تقریب کے دوران پیش آیا۔یہ چاول اس مذہبی اجتماع کے بعد روایتی طور پر پیش کیے جاتے ہیں۔ کئی لوگوں نے اس واقعے پر صدمے کا اظہار کیا جن میں سابق انڈین وزیرِ اعظم ایچ ڈی دی گودا شامل ہیں۔انھوں نے ٹویٹ کیا ’جن خاندانوں کے لوگوں کی جانیں گئی وہ اپنا ضبط قائم رکھیں تاکہ وہ اس تکلیف کو سہہ پائیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *