دہلی لوک سبھا انتخابات 2019 : ابتدائی رجحانات میں 6 سیٹوں پر بی جے پی آگے، 1 پر کانگریس

 

17 ویں لوک سبھا میں رہنما بن کر کون کون پہنچنے والا ہے، یہ آج طے کیا جائے گا. کل 543 سیٹوں میں سے 542 نشستوں کے لئے ووٹوں کی گنتی شروع ہو گئی ہے. دہلی میں 7 لوک سبھا سیٹیں ہیں جن میں منوج تیواری، شیلا دکشت، ڈاکٹر هرشورددھن جیسے بڑے ناموں پر فیصلہ ہونا ہے.

 

دہلی کی تمام ساتوں نشستوں کے رجحانات مسلسل آ رہے ہیں، اگرچہ تمام ساتوں میں سے کسی بھی سیٹ پر ووٹوں کی گنتی کا پہلا راؤنڈ مکمل نہیں ہے. اب تک کے رجحانات کے مطابق، جنوبی، مغربی اور شمالی ویسٹ کے امیدوار آگے چل رہے ہیں. ویسٹ دہلی سے بی جے پی امیدوار پرویش ورما 4 ہزار سے زیادہ ووٹوں سے آگے چل رہے ہیں.

 

دہلی کی 6 سیٹوں پر بی جے پی آگے چل رہی ہے جبکہ ایک پر کانگریس کا پلڑا بھاری ہے. ایگزٹ پولز کے مطابق، اس بار بھی ساتوں نشستیں بی جے پی کے اکاؤنٹ میں جائیں گی. راجدھانی دہلی کی بات کریں کو ایگزٹ پولز کے مطابق اس بار بھی بی جے پی کا پلڑا بھاری رہے گا، جبکہ حکمراں عام آدمی پارٹی اور کانگریس کو دھچکا لگ سکتا ہے. 6 میں سے 4 ایگزٹ پولز کے مطابق دہلی کی ساتوں نشستیں بی جے پی کے اکاؤنٹ میں جانے والی ہے.

 

ایگزٹ پولز ایک اور اشارہ کر رہے ہیں. دہلی میں حکمران عام آدمی پارٹی اس بار دوسرے سے كھسك كر تیسرے نمبر کی پارٹی بن سکتی ہے. بی جے پی کے ووٹ شیئر میں تھوڑی کمی آنے کا اندازہ اور کانگریس کا اضافہ ہو گا. بی جے پی نے اپنے 5 موجودہ ممبران پارلیمنٹ پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے انہیں میدان میں اتارا، جبکہ مہیش گری اور ادت راج کی جگہ بالترتیب مہیش دانا اور ہنس راج ہنس کو موقع دیا ہے. وہیں، کانگریس نے بھئی اہم امیدوار اتارے ہیں. AAP کی جانب سے آتشی ، دلیپ پانڈے اور راگھو چڈھا جیسے اہم امیدوارکی قسمت کا آج فیصلہ ہونا ہے. نئی دہلی، نارتھ ایسٹ دہلی اور چاندنی چوک دہلی کی گرم ہیں جو ملک کی سیاست کی سمت طے کرنے میں اہم کردار ادا کرتی رہی ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *