کمل ہاسن کے خلاف سماعت سے دہلی ہائی کورٹ کا انکار

Share Article

kamal-hasan

نئی دہلی: دہلی ہائی کورٹ نے بی جے پی لیڈر اور وکیل اشونی اپادھیائے کے ذریعہ کمل ہاسن کے خلاف دائر درخواست پر سماعت کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ کورٹ نے کہا کہ آپ کو دہلی ہائی کورٹ کی بجائے مدراس ہائی کورٹ جانا چاہئے۔ سماعت کے دوران الیکشن کمیشن نے کہا کہ اس کے پاس بھی یہ معاملہ آیا ہے۔ہمیں اس پر فیصلہ لینے کے لئے وقت چاہئے۔
آج صبح جب اس درخواست کو چیف جسٹس راجندر مینن کی صدارت والی بنچ کے سامنے ذکر کیا گیا تو عدالت نے آج ہی سماعت کرنے کا حکم دیا تھا۔
اشونی اپادھیائے نے مطالبہ کیا تھا کہ الیکشن کمیشن کو ہدایت دی جائے کہ وہ کمل ہاسن کے خلاف کارروائی کرے۔ کمل ہاسن نے ناتھو رام گوڈسے کو آزاد ہندوستان کا پہلی انتہا پسند ہندو قرار دیا تھا۔
کمل ہاسن نے مکن نیدھی میئم (ایم این ایم) نامی سیاسی جماعت قائم کی ہے۔ انہوں نے تمل ناڈو کیاروکوریچی میں گزشتہ 12 مئی کو ایک انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے ناتھورام گوڈسے پر یہ بیان دیا تھا۔ اس بیان پر سیاسی ہنگامہ مچ گیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *