زبردستی طلاق دلانے کے خلاف بیٹی نے والد کے خلاف کی شکایت

Share Article

 

ایک خاتون نے اپنے والد کے خلاف پولیس کو تحریر دے کر کارروائی کا مطالبہ کیا ہے ۔ والد کے ذریعہ مہر کی رقم ہڑپنے کے لئے اپنی بیٹی کو طلاق دلائے جانے کا معاملہ روشنی میں آیا ہے ۔ خاتون نے کوتوالی میں تحریر دے کر کارروائی کا مطالبہ کیاہے ۔ دیوبند کی ایک خاتون نے پولیس کو تحریر دیتے ہوئے کہا کہ کچھ سال قبل اس کے والد نے اس کی شادی محلہ میں ہی ایک شخص کے ساتھ کردی تھی جس کے بعد وہ ہنسی خوشی زندگی بسر کررہی تھی لیکن والد نے روپے کے لالچ میں مجھے طلاق دلادیا اورمہر میں آئی رقم 75ہزار روپے ہڑپ لی ، خاتون کا الزام ہے کہ طلاق کے بعد اس کا باپ اس کی دوسری شادی کرنا چاہتا تھا، جب اس نے اس سے انکارکیا اور اپنے والد سے مہر کی رقم مانگی تو اس کے ساتھ گالی گلوچ اور مارپیٹ کرکے اسے گھر سے نکال دیا ۔

 

خاتون نے الزام لگایا کہ اس سے قبل بھی اس کا باپ ایک ضعیف کے ہاتھ اس کو فروخت کرآیا تھا جہاں سے وہ بہ مشکل جان بچاکر نکلی تھی ۔ دیوبند کوتوال آنند دیو کا کہنا ہے کہ تحریر کی بنیاد پر جانچ کی جارہی ہے اس کے بعد ملزم کے خلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *