داغدار ہیں تو کیا ہوا

Share Article

ریاستی ایڈمنسٹریٹیو سروس کے افسران کی کمی جھیلنے والی پنجاب تنہا ریاست نہیں ہے، لیکن اس مسئلہ سے نمٹنے کے لیے اس نے نرالا راستہ نکال لیا ہے۔ ریاست میں پنجاب ایڈمنسٹریٹیو سروس کے کل 288عہدے ہیں، لیکن فی الحال 160افسران دستیاب ہیں۔ ریاستی ایڈمنسٹریشن کے اعلیٰ افسران نے حالیہ دنوں میں سبکدوش ہونے والے افسران کو پھر سے بحال کرنا شروع کیا ہے۔ ان افسران کو کنٹریکٹ پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر، سب ڈویژنل مجسٹریٹ، اسسٹنٹ ٹیکس کمشنر اور ایکسائز کمشنر جیسے عہدوں پر دوبارہ تعینات کیا جارہا ہے، لیکن ریاست کے نوکر شاہ اس نئی شروعات سے بے فکر ہیں۔ بتایا جاتاہے کہ دوبارہ تعینات کیے گئے کئی افسران کا ماضی داغ دار رہا ہے، لیکن ریاست کے چیف سکریٹری ایس سی اگروال کی صدارت میں تقرری کرنے والی کمیٹی نے اس جانب کوئی دھیان نہیں دیا۔
دلچسپ بات یہ ہے کہ دوبارہ بحال کیے جانے والے مذکورہ افسران کے اپنے پرانے عہدوں سے کم اہمیت والے عہدوں پر بھی تقرر کیے جارہے ہیں۔ حالانکہ ذرائع بتاتے ہیں کہ سرکار نے اب ریاستی پبلک سروس کمیشن کو اہل افسران کا پروموشن کرنے کا حکم دیا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *