تو کیا اب کانگریس چھوڑ دیں گی پرینکا چترویدی، کہا۔ غنڈوں کی پارٹی ہے

Share Article

priyanka

لوک سبھا انتخابات سے پہلے کانگریس کو ایک اور جھٹکا لگ سکتا ہے۔ پارٹی کی سرگرم ترجمان پرینکا چترویدی پارٹی چھوڑنے والی ہیں۔ یہ سوال اس لئے اٹھ رہے ہیں کیوں کہ آج خود پرینکا نے اپنی ہی پارٹی کو کٹگھرے میں کھڑا کر دیاہے۔ترجمان پرینکا چترویدی نے الزام لگایا ہے کہ پارٹی میں ان غنڈوں کو توجہ دی جا رہی ہے، جو خواتین کے ساتھ بدسلوکی کرتے ہیں۔

پرینکا نے اپنے ٹویٹ میں لکھا کہ، آج میں پارٹی کے ایک فیصلے سے بے حددکھی ہوں۔جو لوگ محنت کرکے اپنی جگہ بنا رہے ہیں، ان کے بدلے ایسے لوگوں کو توجہ مل رہی ہے۔ پارٹی کے لئے میں نے گالیاں اور پتھر کھائے ہیں، لیکن اس کے باوجود پارٹی میں رہنے والے لیڈروں نے ہی مجھے دھمکیاں دیں۔

پرینکا نے آگے لکھا کہ جو لوگ دھمکیاں دے رہے تھے، وہ بچ گئے ہیں۔ ان کا بغیر کسی سخت کارروائی کے بچ جانا کافی بدقسمتی کی بات ہے۔آپ کو بتا دیں کہ پرینکا چترویدی نے ایک ٹویٹ کو ری ٹویٹ کرتے ہوئے اس پیغام کو لکھا، اس کے ساتھ ایک خط بھی منسلک ہے۔

دراصل یہ پورا معاملہ تب کا ہے جب ملک بھر میں کانگریس رافیل کے معاملے پر بی جے پی حکومت کو گھیر رہی تھی۔ تب اترپردیش کے متھرا پرینکا چترویدی بھی پارٹی کی جانب سے رافیل طیارے سودے پر پریس کانفرنس کرنے آئی تھیں۔ اس وقت ان کے ساتھ کچھ مقامی کارکنوں نے ان کے ساتھ بدسلوکی کی۔اس کے بعد سبھی پر تادیبی کارروائی ہوئی تھی۔

لیکن چند ماہ کے اندر ہی سبھی کارکنوں کو ان کے عہدوں پر دوبارہ سے بحال کر دیا گیا ہے۔خط کے مطابق، جیوتی رادتیہ سندھیا کی سفارش کے بعد ان کارکنوں کو بحال کیا گیا ہے۔ بتا دیں کہ جیوتی رادتیہ سندھیا پارٹی کے قومی جنرل سکریٹری ہیں اور لوک سبھا انتخابات کے لئے مغربی اترپردیش کے انچارج ہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *