کانگریس نے بی جے پی کے ’سنکلپ پتر‘کوبتایا’جھانسہ پتر‘،کہا- 2014 کے وعدوں کا کیا ہوا؟

Share Article
ahmed-patel

نئی دہلی: بھارتیہ جنتا پارٹی کے سنکلپ پتر(قرارداد خط) کو کانگریس پارٹی نے جھوٹ کا غبارہ قرار دیا ہے۔ کانگریس لیڈر احمد پٹیل نے پیر کو پریس کانفرنس میں بی جے پی کے سنکلپ پتر پر کرارا وار کیا اور انہیں جھوٹ کا وعدہ بتایا۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کے منشور میں صرف میں ہی میں ہوں، اس میں نہ ملک ہے اور نہ پارٹی ہے۔

احمد پٹیل نے کہا کہ بی جے پی کے منشور میں صرف میں، میرا اور میرا انا شامل ہے۔ ایک طرف ہمارے منشور کے فرنٹ پر ملک کے عوام کی تصویر ہے تو بی جے پی کیسنکلپ پتر پر صرف وزیر اعظم نریندر مودی کی تصویر ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ صرف جھوٹ کا غبارہ ہے، اس سے اچھا ہوتا کہ بی جے پی معافی نامہ جاری کر دیتے۔ انہوں نے کہا کہ آج ملک میں بے روزگاری ہے لیکن روزگار کے وعدوں کا کیا ہوا۔

وہیں دوسری طرف کانگریس کے ترجمان رندیپ سنگھ سرجیوالا نے کہا ہے کہ بی جے پی کے سنکلپ پتر ایک جھانسہ پتر ہے۔ بی جے پی والے انتخابات کے پہلے رام مندر کی بات کرتے ہیں انتخابات کے پہلے انہیں بھگوان رام کی یاد آتی ہے لیکن بھگوان رام پر یہ 5 سال خاموش رہتے ہیں۔رندیپ نے کہا کہ اصل میں بی جے پی والے ہی کے کئی اور منتھرا کا کردار ادا کر رہے ہیں جنہوں نے تقریبا 30 سال سے بنواس بھیج دیا ہے۔ کانگریس کے ترجمان نے کہا کہ بی جے پی کے اس بار کے سنکلپ پتر میں نہ ہی 2 کروڑ روزگار کے وعدے پر بات کی گئی جو وعدہ انہوں نے گزشتہ مینی فیسٹو میں کیا تھا اور نہ ہی اس وقت روزگار کے لئے کوئی وعدہ کیا گیا ہے۔

کانگریس کے ترجمان نے کہا، بی جے پی یعنی ’بے روزگاری جماؤ پارٹی‘ نے ملک میں کروڑوں نوکریاں ختم کرنے کے بعد اب بیرون ملک بھی ہندوستانیوں کی نوکریاں چھننے میں بھی کردار ادا کیا ہے۔ امریکہ جب H۔4، H1۔B، L۔1 ویزا کے قوانین سخت کر رہا تھا، تب مودی حکومت خواب غفلت کینیند میں سوتی رہی، نتیجہ ۔ اب 3 ملین ہندوستانی متاثر!

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *