کانگریس رام مندر کی تعمیر کے حق میں: سرجیوالا

Share Article
Congress in favor of construction of Ram temple: surjewal

کانگریس نے ہفتہ کو رام مندر بابری مسجد تنازعہ پر آئے سپریم کورٹ کے فیصلے کا خیر مقدم کیا ہے اور تمام فریقوں اور کمیونٹیز سے اسے قبول کرنے کی اپیل کی ہے۔پارٹی کے میڈیا انچارج رندیپ سنگھ سرجیوالا نے کہا کہ کانگریس رام مندر تعمیر کے حق میں ہے۔انہوں نے کہاکہ انڈین نیشنل کانگریس کی ورکنگ کمیٹی کی میٹنگ میں رام مندر کو لے کر ایک تجویز قرارداد منظور کیا گیا ہے۔ کانگریس کے ترجمان سرجیوالا نے پارٹی ہیڈ کوارٹر میں پریس کانفرنس کر کے اس تجویز کی معلومات دی۔ انہوں نے کہا کہ اجلاس کی صدارت سونیا گاندھی نے کی۔سرجیوالا نے کہا کہ کانگریس سپریم کورٹ کے فیصلے کا احترام کرتی ہے۔ پارٹی کے تمام متعلقہ فریقوں سے درخواست کرتی ہیں اعلیٰ اقدار کو نبھاتے ہوئے امن چین کا ماحول برقرار رکھیں۔ ہر ہندوستانی کی ذمہ داری ہے کہ وہ ملک کی صدیوں پرانی باہمی رواداری اور اتحاد کی ثقافت اور روایت کو متحرک رکھیں۔ سرجیوالا نے کہا کہ کانگریس شری رام مندرکی تعمیر کے حق میں ہے۔سپریم کورٹ نے اس پورے معاملے کا نمٹارہ اپنے فیصلے سے کر دیا ہے۔ کانگریس ترجمان نے کہا کہ اس فیصلے کا کریڈٹ کسی کو نہیں لینا چاہئے۔ حالانکہ انہوں نے یہ بھی کہا کہ 1993 میں مندر سے منسلک زمین کا حصول انہی کی حکومت نے کیا تھا۔کانگریس لیڈر نے کہا کہ معاملہ کسی شخص، خاص گروپ یا پارٹی کو سہرا دینے کا نہیں ہے۔ سپریم کورٹ نے آستھااور وشواس کا احترام کیا ہے۔ عدالت عظمی کے آج کے فیصلے سے رام مندر کی تعمیر کے دروازے تو کھل ہی گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس فیصلے سے بھارتیہ جنتا پارٹی اور دیگر عقیدے کے ٹھیکیداروں کے لئے سیاست کرنے کے دروازے بھی ہمیشہ کے لئے بند ہو گئے۔رام عہد کے لئے ایثار کی علامت ہیں اقتدار کے حصول کا ذریعہ نہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *