بہار کے کشن گنج میں ہی برقرار رہا کانگریس کا قلعہ

Share Article

 

لوک سبھا انتخابات 2019 میں نریندر مودی کی لہرکے آگے کسی بھی اپوزیشن پارٹی کی کوئی دال نہیں گلی۔ بہار میں تو صرف کشن گنج سیٹ پر کانگریس اپنا قلعہ بچانے میں کامیاب رہی۔ کانگریس امیدوار ڈاکٹر جاوید آزاد کو 366820 ووٹ ملے۔ دوسرے نمبر پر این ڈی اے امیدوار کو 332325 ووٹ ملے، جبکہ تیسرے نمبر پر ایم آئی ایم امیدوار اخترالایمان 294859 ووٹ ہی اکتفا کرنا پڑا۔

 

کس کو کتنے ووٹ ملے:

 

بی ایس پی کے اندردیو پاسوان 6790 ٹی ایم سی کے جاوید اختر5481 عام آدمی پارٹی کے علیم الدین انصاری 9822 شیوسینا کے پردیپ کمار سنگھ 3260 بہوجن مکتی پارٹی کے راجندر پاسوان 4013جھارکھنڈ مکتی مورچہ کے شکل مرمو 10273 آزاد امیدوار عظیم الدین 4755 آزاد امیدوار اشد عالم 8133 آزاد امیدوار چھوٹے لال مہتو 8699 آزاد امیدوار راجیش دوبے 15182 آزاد امیدوارہسیرل 10860 ووٹ لائے ہیں۔ اتنا ہی نہیں لوک سبھا انتخابات میں اس سیٹ پر لوگوں نے نوٹا کے بٹن کا بھی جم کر استعمال کیا۔ یہاں سے 19719 نوٹا کو پڑے۔

 

وہیں ممبر اسمبلی سے ممبر پارلیمنٹ بنے ڈاکٹر آزاد نے بتایا کہ یہاں کے لوگوں کے چاہت کی جیت ہوئی ہے۔ لوگوں نے اپنی محبت اور حمایت ہمیں دی ہے۔ ہماری بھی کوشش رہے گی کہ لوگوں کہ توقعات پر اتریں۔ انہوں نے کہا کہ میری پہلی ترجیح ترقی کرنے کی ہی ہوگی۔ قابل ذکر ہے کہ 1957 سے 2019 تک 17 ویں لوک سبھا انتخابات میں کانگریس نے کشن گنج سے نو بار کامیابی حاصل کی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *