کالج نے گھٹنے کے اوپر کرتی پہننے پر لگائی روک، کہا- اس سے شادی کے لئے لڑکیوں کو ملیں گے اچھے رشتے

Share Article
College bans Kurti above knee, says girls will get good relationship for marriage

حیدرآباد: سینٹ فرانسس کالج فار وومین نے گھٹنوں سے اوپر پہنی جانے والی کرتی پر پابندی لگا دی ہے۔ کالج کا کہنا ہے کہ طویل کرتی پہننے سے شادی کے رشتے زیادہ آئیں گے۔ اس پورے معاملے میں کالج کے اسٹوڈنٹس نے حیدرآباد میں مظاہرہ کیا۔ دراصل کالج نے اسٹوڈنٹس کے لئے ایک ڈریس کوڈ طے کیا ہے۔ انڈیا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق اسٹوڈنٹس کو حکم دیا گیا ہے کہ وہ گھٹنوں کے نیچے تک کرتی، سليو کے ساتھ پہنو۔ اس کے علاوہ شارٹس، سليولیس اور اس طرح کی باقی ڈریسوں پر پابندی لگا دیا گیا ہے۔ اس کی وجہ سے بہت سے اسٹوڈنٹس کو مبینہ طور پر کلاس میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی گئی کیونکہ ان کے کپڑے قوانین کے مطابق نہیں تھے۔

یہ نیا اصول ایک اگست سے لاگو کیا گیا ہے۔ ایک طالب علم نے بتایا کہ ایک وقت میں جب ہم خواتین کو بااختیار بنانے کی بات کرتے ہیں تو اس طرح کے فرمان پورے مہم کے خلاف ہیں۔

کالج کی سابق طالبہ نے فیس بک پوسٹ کے ذریعے بتایا کہ طالبات کے نمائندوں سے کہا گیا کہ طویل کرتی پہننے سے اچھا شادی کے رشتے آئیں گے۔

انہوں نے دعوی کیا کہ طالبات کو کرتی پہننے کے لئے مسلسل ذلیل کیا گیا تھا جبکہ ان کی کرتی گھٹنے صرف ایک انچ کم یا ایک انچ اوپر تھی۔ انہیں باہر کھڑے رہنے کے لئے کہا گیا اور وہ کلاس رومز اور ٹیسٹ میں شامل نہیں ہوسکیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *