راہل گاندھی کے ساتھ گاڑی پرچڑھ کرسیلفی کھنچوانے والی لڑکی منتشاسرخیوں میں

Share Article
mantasha-rahul-gandhi-selfie
گجرات میں راہل گاندھی کی انتخابی تشہیرکے دوران ان کی گاڑی پرچڑھ کرسیلفی کھنچوانے والی لڑکی سرخیوں میں ہے۔ان کی فوٹوسوشل میڈیامیں تیزی وائرل ہورہاہے۔’نئی دنیا،دینک جاگرن‘ کے مطابق ایس پی جی سیکوریٹی کوچقمہ دیکرکانگریس نائب صدرراہل گاندھی تک پہنچنے والی یہ لڑکی دسویں جماعت کی طالبہ منتشاہے۔وہ یکم نومبرکواپنی کلاس چھوڑکرراہل کی ریلی میں شامل ہوگئی تھی۔منتشابھروچ میں دہلی پبلک اسکول کی طالبہ ہے۔کلاس چھوڑنے کیلئے انہوں نے والدابراہیم سے اجازت لی تھی۔ابراہیم کی بھروچ ریلوے اسٹیشن کے پاس دکان ہے،جہاں وہ ایک پرائیویٹ ٹیلی کام کمپنی کے پراڈکٹ فروخت کرتے ہیں۔منتشانے پورے واقعہ کاذکرکرتے ہوئے بتایا،کانگریس نائب صدرراہل کی ریلی جب ریلوے اسٹیشن کے قریب سے گزررہی تھی،تب انہوں نے میری طرف ہاتھ ہلایاتھا۔اس کے بعدمیں بھی ریلی میں شامل ہوگئی اورمقامی شیتل گیسٹ ہاؤس کے پاس جاکرمیں نے ان سے سیلفی کیلئے ریکویسٹ کی ۔وہ فوراً راضی ہوگئے اورمجھے مینی وین پرچڑھنے میں مددکی،اس کے بعدمیں نے سیلفی کھنچوائی۔
عیاں رہے کہ منتشاکاخاندان کانگریس سپوٹرہے۔راہل سے ہوئی بات چیت کے بارے میں اس نے بتایا’میں نے راہل کاشکریہ اداکیاکہ انہوں نے سیلفی کی میری بات مان لی ۔ساتھ میں نے گجرات انتخابات کیلئے انہیں ’گڈلک‘کہا۔بقول منتشا،ایک سیاسی لیڈرکے طورپرمیں راہل گاندھی کوپسندکرتی ہوں۔ان کی دادی اندراگاندھی کی بھی فین ہوں اوراندراپرلکھی ہوئی کتابیں پڑھ چکی ہوں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *