چین، کوریا اور کینیڈا نے سیٹلائٹ سے لی آسام سیلاب کی تصاویر

Share Article
China first to share satellite data with India on floods in Assam

 

چین، کوریا، کینیڈا سمیت دنیا کے کئی ممالک نے سیٹلائٹ کے ذریعے آسام میں آئے شدید سیلاب کی تصاویر کھینچ کراسرو کو بھیجے ہیں۔ ہفتہ کوحاصل معلومات کے مطابق پہلے چین نے آسام کے سیلاب کی تصاویرکھینچی۔

Image result for China, Korea and Canada photos of the Assam floods from satellite

بعد میں اسرو کی درخواست پر کوریا، کینیڈا سمیت کئی ممالک نے سیلاب کی اچھے معیار کی فوٹو کھینچ کر اسرو کو بھیجے۔ یہ تصاویر حکومت ہند کو بھیجی گئی ہیں تاکہ سیلاب امدادی کام میں ان تصاویر سے مدد مل سکے۔ ان ممالک نے آسام کے علاوہ بہار کے سیلاب کی تصاویر بھی سیٹلائٹ سے لئے۔

Image result for China, Korea and Canada photos of the Assam floods from satellite

آسام میں اس بار سیلاب گزشتہ کئی سالوں کے مقابلے میں بہت زیادہ تھی، جہاں پہلے مرحلے کے سیلاب میں بالائی آسام سمیت ریاست کے 20 ضلع متاثر ہوئے تھے، وہیں دوسرے مرحلے میں پڑوسی ملک بھوٹان کے ڈیموں سے پانی چھوڑے جانے کی وجہ سے زیریں آسام میں شدید سیلاب کی صورتحال پیدا ہو گئی ہے۔ اگرچہ ریاست میں امدادی کام جنگی سطح پر چل رہا ہے۔

Image result for China, Korea and Canada photos of the Assam floods from satellite

قابل ذکر ہے کہ مرکزی حکومت نے سیلاب کی صورتحال سے نمٹنے کے لئے آسام حکومت کو 252 کروڑ روپے کی مدد دی ہے۔ اس کے علاوہ فلم اداکار اکشے کمار نے دو کروڑ، اڑن پری ہیما داس نے گولڈ میڈلوں کے ذریعہ حاصل اپنے ایوارڈ کی رقم میں سے آدھی رقم آسام کے سیلاب امداد کے لئے دیئے ہیں۔ ان سب کے علاوہ بڑی تعداد میں مختلف سطح پر لوگ وزیر اعلی راحت فنڈ میں سیلاب ریلیف کے لئے گرانٹ دے رہے ہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *