Chandrayaan-2 کو لگیں گے 48 دن، محض 8 گھنٹے میں پہنچی تھی NASA کی یہ سیٹلائٹ

Share Article

 

ISRO کا دوسرا مون مشن Chandrayaan-2 آج یعنی 22 جولائی کی دوپہر 2.43 بجے ملک کے سب سے طاقتور راکٹ GSLV-MK3 سے لانچ کیا جائے گا۔ قریب 16.23 منٹ کے اندر چندریان -2 زمین سے قریب 182 کلومیٹر کی اونچائی پر جی ایس ایل وی -ایم کے 3 راکٹ سے الگ ہو کر زمین کے مدار میں چکر لگانا شروع کرے گا۔

Image result for Chandrayaan-2 will take 48 days, arrives in just 8 hours NASA satellite

بھارتی خلائی تحقیق تنظیم ISRO کا دوسرا مون مشن Chandrayaan-2 آج یعنی 22 جولائی کی دوپہر 2.43 بجے ملک کے سب سے طاقتور دبنگ راکٹ GSLV-MK3 سے لانچ کیا جائے گا۔ قریب 16.23 منٹ میں چندریان -2 زمین سے 182 کلومیٹر کی اونچائی پر جی ایس ایل وی -ایم کے 3 راکٹ سے الگ ہو کر زمین کے مدار میں چکر لگانا شروع کرے گا۔پھر اسے چاند کے جنوبی قطب پر اترنے کے لئے 48 دن کے سفر طے کرنی پڑے گی۔ لیکن امریکی خلائی ایجنسی NASA نے ایک ایسا مشن بھیجا تھا جس میں صرف 8.30 گھنٹے میں چاند تک پہنچ گیا تھا۔

Image result for Chandrayaan-2 will take 48 days, arrives in just 8 hours NASA satellite

چندریان -2 کے 48 دن کے سفر کے مختلف پڑاؤ

چندریان -2 خلائی جہاز 22 جولائی سے لے کر 13 اگست تک زمین کے چاروں طرف چکر لگائے گا۔ اس کے بعد 13 اگست سے 19 اگست تک چاند کی طرف جانے والی طویل کلاس میں سفر کرے گا۔19 اگست کو ہی یہ چاند کے مدار میں پہنچے گا۔ اس کے بعد 13 دن یعنی 31 اگست تک وہ چاند کے چاروں طرف چکر لگائے گا۔ پھر 1 ستمبر کو وکرم لینڈر ربٹر سے مختلف ہو جائے گا اور چاند کے جنوبی قطب کی طرف سفر شروع کرے گا۔ 5 دن کے سفر کے بعد 6 ستمبر کو وکرم لینڈر چاند کے جنوبی قطب پر لینڈ کرے گا۔5 دن کے سفر کے بعد 6 ستمبر کو وکرم لینڈر چاند کے جنوبی قطب پر لینڈ کرے گا۔ لینڈنگ کے قریب 4 گھنٹے بعد روور پرگیان لینڈر سے نکل کر چاند کی سطح پر مختلف استعمال کرنے کے لئے اترے گا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *