شندے کا اظہار ندامتِ، مصلحت یا سمجھوتہ؟

وسیم راشد
ہمارے ملک کے میڈیا کا مزاج بھی عجیب ہے کہ وہ کسی بھی خبر کی تہہ تک پہنچنے کے بجائے اڑتی ہوئی خبروں کو بنیاد بنا کر بریکنگ نیوز کے طور پر پیش کردیتا ہے۔اس کی اس خبر کا اثر عوام کے ذہن و دماغ پر کیا پڑتا ہے ، اس سے ہمارا میڈیا بے خبرہے یا جان بوجھ کر نظر انداز کررہا ہے۔ ہم نے بارہا کئی چینلوں کو دیکھا ہے کہ جب بھی دہشت گردی کے شبہ میں کسی مسلمان کو پکڑا جاتا ہے تو اس وقت یہ میڈیا جرم ثابت ہونے سے پہلے ہی اسے مجرم قرار دیدیتا ہے اور اینکر گرفتار نوجوان کو انڈین مجاہد کہہ

Read more

افضل گرو کی میت کے ساتھ غیر انسانی سلوک

وسیم راشد
نو فروری کی صبح چینلز کے لئے زبردست مسالہ لے کر نمودار ہوئی۔دھڑا دھڑ افضل گرو کی پھانسی کی سزا سبھی چینلز پر ٹیلی کاسٹ ہونے لگی۔ ہر چینل پر خبر، ہر چینل پر افضل گرو کی پھانسی پر اہم شخصیات کے انٹرویوز، غرضیکہ تمام میڈیا کو اس دن کا موضوع مل چکا تھا۔وہ اس خبر سے پوری طرح کھیل رہے تھے۔جس طرح قصاب کی اچانک پھانسی کی خبر نے سب کو حیرت زدہ کردیا تھا اسی طرح افضل گرو کی خبر نے بھی لوگوں کو حیران کردیا اور ظاہر ہے اتنی بڑی خبر کے بعد کشمیر میں

Read more

نفرت کی سیاست کب تک ؟

وسیم راشد
ہندوستان میں مقدس کنبھ میلہ چل رہا ہے۔یہاں عقیدت مندبڑی تعداد میںروحانی غذا حاصل کرنے کے لئے جمع ہوتے ہیں مگر ہمارے ملک کے سیاست داں اس مقدس میلے پر بھی سیاست کا رنگ چڑھانے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں۔ البتہ سادھوئوں کے ایک گروپ نے انتہائی سمجھداری سے کام لیتے ہوئے با قاعدہ تنبیہ کی ہے کہ کوئی بھی اس میلے کے تقدس کو پامال نہ کرے۔سادھوئوں کو اس بیان کی ضرورت اس لئے پڑی کہ بی جے پی کے لیڈران خاص طور پر نریندر مودی، اس مذہبی میلے کو اپنی سیاسی امیج بنان

Read more

انا ہزارے کی ریلی: یقینا یہ مسلمانوں کے فائدے کا سودا ہے

وسیم راشد
ملک کے عوام کو عرصہ سے ایک ایسے قائد کا انتظار تھاجو ملک میں ہر طرف پھیلی بد عنوانی اور افسر شاہی کے خلاف آواز بلند کرسکے۔جب انا ہزارے نے حکومت اور حکومت میں بیٹھے افسروں اور لیڈروں کے ذریعہ انجام دیے جارہے گھوٹالوں اور بد عنوانیوں کے خلاف آواز بلند کی تو عوام کو ایسا لگا گویا ان کے دل کی مراد پوری ہورہی ہے اور انہیں ایک ایسا قائد مل گیا ہے جو ملک میں پھیلی بد عنوانی کے خلاف عوام کو متحد کرکے ایک ایسا نظام لانے میں کام

Read more

جسٹس ورما رپورٹ: قوانین سخت ہوں تو جرائم کم ہوں گے

وسیم راشد
ملک میں امن و سلامتی کے لئے یہ بات بہت ضروری ہوتی ہے کہ جرائم پیشہ افراد پر نکیل کسنے کے لئے قوانین نہ صرف سخت ہوں بلکہ ان قوانین پر مخلصانہ کوششیں بھی کی جائیں۔ملک کے مختلف خطوں میں جو عصمت دری اور لوٹ کھسوٹ کے واقعات تقریباً ہر روز ہوتے ہیں اس کی وجہ بھی یہی ہے کہ ہمارے ملک میں قانون تو ہے لیکن یا تو اس میں اتنی پیچیدگیاںہیں کہ مجرم آسانی سے بچ نکلتا ہے یا پھر قانون میں سختی کا ایسا پہلو شامل

Read more

چنتن شیور! ملک کی چنتا نہیں، 2014کی چنتا ہے

وسیم راشد
ڈیزل کی قیمت بڑھ رہی ہے۔راجدھانی سمیت دوسرے شہروں میں عصمت دری کے واقعات میں اضافہ ہورہا ہے۔دہلی پولیس کمشنر یقین دہانی کراتے ہیں کہ خواتین کی شکایت پر فوری ایکشن ہوگا،اس کے باوجود سات سال کی ایک معصوم بچی درندگی کا شکار ہوجاتی ہے،مظفر نگرمیں ایک دلت لڑکی کی اجتماعی عصمت دری ک

Read more

نظام کو تبدیل کیجئے

سنتوش بھارتیہ
نظام میں تبدیلی کیسے ہو اور اس کی شروعات کیسے ہوگی، اس سوال کا جواب تلاش کرنے کی کوشش ہونی چاہیے۔ جب ہم نظام کہتے ہیں تو اس میں سرکار بھی آتی ہے، سماج بھی آتا ہے اور سرکار و سماج سے پیدا ہونے والی ساری تنظیمیں بھی آتی ہیں۔ نظام میں تبدیلی کی بات ہی اس لیے اٹھ رہی ہے، کیوں کہ موجودہ نظام 80 فیصد لوگوں کے لیے ناکارہ ہو

Read more

اے نوجوانو! اب تم ہی سنبھالو ملک کی باگ ڈور

وسیم راشد
کڑا کے کی سردی، پاکستان اور ہندوستان کا میچ،لگاتار ملک کے مختلف حصوں میں عصمت دری کے واقعات، نفرت کی سیاست کرتے آر ایس ایس لیڈر بھاگوت اور اکبر الدین اویسی کا بیان اور گینگ ریپ کا شکار لڑکی کی موت کے بعد لگاتار مظاہرے اور ریلیاں۔یہ ہیں ہمارے ملک کی سرگرمیاں،جن پر بعض اوقات شرم آجاتی ہے مگر ان تمام شرمناک اور دردناک واقعات کے باوجود ایک امید کی کرن

Read more

کے رحمٰن خان صاحب! 350کروڑ کی ہیرا پھیری کا جواب کون دے گا؟

وسیم راشد
سلمان خان 47 سال کے ہوگئے۔جی ہاں ! یہی خبر سارے چینلز پر ہم نے اُس وقت دیکھی جب دہلی میں گینگ ریپ کا شکار ہوئی لڑکی موت و زیست کی کشمکش میں مبتلا تھی اور اللہ جانے جب تک یہ آرٹیکل آپ کے ہاتھوں میں ہو،اس وقت تک لڑکی کی قسمت کیا رنگ دکھائے۔ اور اس وقت بھی جب نظام الدین پر ہزاروں طلباء و طالبات دہلی کے پولیس کمشنر کو ہٹائے جانے کا مطالبہ کر رہے تھے،جب

Read more

لٹکا دو ان درندوں کو سر ِ عام پھانسی پر

وسیم راشد
یہ انتہائی تشویش کی بات ہے کہ ملک کے ہر شہر میں عصمت دری اور گینگ ریپ کے واقعات تقریباً ہر روز ہورہے ہیں۔جو واقعات بڑے شہروں میں ہوتے ہیں ان کی تو رپورٹنگ ہوجاتی ہے اور میڈیا ان کوعوام کے کانوں تک پہنچا دیتا ہے، لیکن ملک میں بے شمار ایسے گائوں اور قصبے ہیں جہاں تک میڈیا کی رسائی نہیں ہے۔وہاں ہونے والے حادثے عام نگاہوں سے اوجھل رہتے ہیں۔بلکہ بڑے

Read more
Page 10 of 23« First...89101112...20...Last »