۔۔۔اور مجھے دے دی گئی سزائے موت

اویس شیخ
پورے ہندوستان اور پوری دنیا کو پتہ ہے کہ میں سربجیت سنگھ ولد سلکھان سنگھ پنجاب (ہندوستان ) کا رہنے والا ہوں اور آج پاکستان کے شہر لاہور کی کوٹ لکھپت جیل میں قید کے دن گزار رہا ہوں۔ رہائی کے انتظار میں دن گزارنا کتنا مشکل ہوتا ہے ، یہ مجھ سے بہتر کون جانتا ہو گا۔جیسا کہ دنیا والے اور ہندوستان والے جانتے ہیں کہ پاکستان کے اعلیٰ افسران مجھے منجیت سنگھ ثابت کرنے کے لیے

Read more

ڈیرہ سچاسودا کی گھنائونی کہانی ایک صحافی کی زبانی

شیلا پونیہ نے سی بی آئی کی معتبریت پر شک ظاہر کرتے ہوئے ہریانہ پولس کی سی آئی ڈی سے جانچ کرانے کی گزارش کی تھی۔ یہ الگ بات ہے کہ عدالت نے اس بیوقوفی بھری عرضی کو خارج کر دیا تھا۔ شیلا پونیہ اس گرلس اسکول کی پرنسپل ہیں، جسے ڈیرہ کے ترجمان ’سچ کہوں‘ نے پری لوک کا نام دیا ہے۔ پونیہ بتاتی ہیں کہ وہ امبالہ میں ایم اے، بی ایڈ اور کمپیوٹر کورس کرکے ڈیرہ سے عقیدت رکھنے والے اپنے والد سابق جج کے توسط سے اس اسکول کی ٹیچر بنیں اور اب یہاں پرنسپل ہیں۔ شیلا پونیہ سے بات چیت کرنے کے بعد ڈیرہ کے بارے میں مزید جاننے کی خواہش میرے من میں پیدا ہونے لگی۔ سب سے زیادہ خواہش مجھے اس غار (گپھا) کو دیکھنے کی تھی، جہاں ڈیرہ چیف رہتے ہیں۔

Read more

اندرونی سازش کا شکار بی جے پی

سنتوش بھارتیہ
بھارتیہ جنتا پارٹی کی سیاست کو بغیر سمجھے آنے والے وقت میں کیا ہوگا، اس کا اندازہ نہیں لگایا جاسکتا۔ بھارتیہ جنتا پارٹی پارلیمنٹ میں اہم اپوزیشن پارٹی ہے اور کئی صوبوں میں اس کی سرکاریں ہیں۔ اس کے باوجود بھارتیہ جنتا پارٹی، جو 2014 کے انتخاب میں دہلی کے تخت پر داؤ لگانے والی ہے، اس وقت سب سے زیادہ پریشان دکھائی دے رہی ہے۔یشونت سنہا، گرو مورتی، ارون جیٹلی،

Read more

ملک یا کرانہ کی دکان

میگھناد دیسائی
آزادی ملنے کے پہلے دس سالوںمیں ہندوستان نے جنگ کے دوران حاصل شدہ اسٹرلنگ خرچ کر دیے۔ یہ ایک بلین پاؤنڈ کی رقم تھی، جسے آج کے سوبلین پاؤنڈ کے برابر کہا جاسکتا ہے۔ سی ڈی دیش مکھ نے کہا تھا کہ ہندوستان نے اس طرح سے پیسے خرچ کیے کہ جیسے بعد میں ان کی کوئی ضرورت نہیں ہوگی۔ اس کے بعد ہندوستان غیر ملکی امدادسے کام چلانے کے لیے مجبور ہو گیا۔ ناوابستہ ہونے کا مطلب ہی یہ تھا کہ کسی بھی ملک سے مدد لینے میں کوئی پریشانی نہیں ہو گی، چاہے وہ یو ایس

Read more

کوئی سی اے جی کو چیلنج نہیں کر سکتا

کمل مرارکا
رٹیل مارکیٹ میں غیر ملکی سرمایہ کاری کے ایشو پر ایک بار پھر بحث ہو رہی ہے۔ یہ ایک ایسا مسئلہ ہے، جس کا اعلان کرنے سے پہلے ملک میں اتفاق رائے ہونا چاہیے تھا۔ گزشتہ لوک سبھا اجلاس کے دوران سرکار نے وعدہ کیا تھا کہ جب تک اس پر اتفاقِ رائے نہیں ہوتا ہے، وہ اسے نافذ نہیں کرے گی، لیکن سرکار نے اچانک اپنا من بدل لیا اور رٹیل مارکیٹ میں غیر

Read more

گجرات الیکشن: کانگریس کے ایجنڈے میں مسلمان ہیں ہی نہیں

گجرات کا انتخاب صرف کانگریس اور بی جے پی کی لڑائی نہیں ہے۔ گجرات انتخاب پر پوری دنیا کی نظر ہے۔ گجرات انتخاب ہندوستان کے مستقبل کو طے کرے گا۔ اس سے یہ طے ہوگا کہ ہندوستان میں سیکولر ازم زندہ ہے یا پھر ہمارے ملک کے لوگوں نے کمیونلزم کو قومی زندگی کا ایک حصہ مان لیا ہے۔ نریندر مودی ایک ایسی سیاست کی رہنمائی کرتے ہیں، جو ہندوتوا کی راہ پر گامزن ہے۔ اس میں ہر فرقہ کے لوگوں کے درمیان یکسانیت کی جگہ نہیں ہے۔ لیکن ایسی طاقتوں سے لڑنے والا کون ہے؟ یہ ذمہ داری ملک کے عوام نے کانگریس کو دی ہے، لیکن کانگریس اس ذمہ داری کو نبھانے میں ناکام رہی ہے۔ اس الیکشن میں کانگریس نے گجرات فسادات کو کیوں بھلا دیا؟ اسے اہم مدعا کیوں نہیں بنایا؟

Read more

کیا ہندوستان میں ٹھیکہ راج چل رہا ہے؟

کوئی بھی ملک اقتصادی اعتبار سے مضبوط تبھی مانا جاتا ہے، جب وہ دوسرے ملکوں سے سامانوں کی درآمدات (اِمپورٹ) کم اور برآمدات (ایکسپورٹ) زیادہ کرتا ہو۔ کپڑا صنعت ایک ایسا شعبہ ہے، جس میں ڈبلیو ٹی او (ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن) کی تازہ اعداد و شمار کے مطابق، ہمارا ملک ہندوستان دنیا کا تیسرا ایسا سب سے بڑا ملک ہے جو چین اور یوروپی یونین کے بعد دنیا کو سب سے زیادہ تیار کپڑے ایکسپورٹ کرتا ہے۔ ہمارے ملک سے ہونے والی کل برآمدات کا 12 فیصد حصہ کپڑوں اور اس سے متعلق سامانوں کی برآمدات پر منحصر ہے۔ سال 2010-11 کے دوران ہمارے ملک سے ٹکسٹائل ایکسپورٹ میں سے تیار کپڑوں کا حصہ 45 فیصد رہا۔ وزارتِ ٹکسٹائل کی 26 مارچ، 2012 کی رپورٹ بتاتی ہے کہ تیار کپڑوں کی برآمدات سے ہندوستان کو پچھلے سال 55 بلین امریکی ڈالر کی آمدنی ہوئی۔ یہی نہیں، ہمارے ملک میں کل صنعتی پیداوار (انڈسٹریل پروڈکشن) کا 14 فیصد حصہ ٹکسٹائل انڈسٹری سے آتا ہے، جو کہ ہماری مجموعی گھریلو پیداوار یا جی ڈی پی کا 4 فیصد ہے۔ کپڑا صنعت وہ شعبہ ہے، جس سے ہمارے ملک کے 35 ملین لوگ جڑے ہوئے ہیں۔ یہ تمام اعداد و شمار تو دیکھنے میں بڑے حسین لگ رہے ہیں اور کسی بھی ہندوستانی شہری کے لیے خوشی کا باعث ہیں، لیکن کیا آپ نے کبھی سوچا ہے کہ ہمارے ملک میں جتنی بھی فیکٹریوں میں کپڑا تیار ہوتا ہے، وہاں کے مزدوروں کی حالت کیا ہے، انہیں تنخواہیں کتنی ملتی ہیں، ان پر ٹھیکہ داروں کی طرف سے کتنے ظلم کیے جاتے ہیں۔ آئیے دیکھتے ہیں، اس رپورٹ میں ……

Read more

یہ کلدیپ نیر صاحب کو کیا ہو گیا؟

ڈاکٹر منیش کمار

اردو اخباروں میں کلدیپ نیر صاحب کا مضمون پڑھا تو بڑی حیرانی ہوئی۔ حیرانی سے زیادہ افسوس بھی ہوا۔ شاید عمر کی وجہ سے ملک کے سب سے بزرگ صحافی کی نظر اتنی کمزور ہو گئی ہو۔ لیکن وہ ہمیشہ ہم جیسے نئے صحافیوں کے لیے حوصلے کا باعث رہے ہیں۔ کلدیپ نیر صاحب نے غیر مدلل اور غلط حقائق کو اپنی بنیاد بنایا ہے۔ حیرانی اس بات پر ہے کہ وہ جنرل وی کے سنگھ کو ’آوارہ گرد‘ اور ’ناشائستہ‘ بتاتے ہیں۔ کلدیپ صاحب یہ بھول گئے کہ جنرل وی کے سنگھ ایسے جانباز فوجی سربراہ رہے، جنہوں نے

Read more

سیاسی ریلیاں کیا کوئی گل کھلا پائیں گی

ڈاکٹر ماجد دیوبندی
حکمراں جماعت ریلیوں کا انعقاد نہیں کرتی ہے۔ ایسا عموماً اُس وقت ہوتا ہے جب حکمراں جماعت کی نگاہ آئندہ انتخابات پر ٹکی ہوئی ہو یا وہ خود کو بحرانوں کے بھنور میں گھرا ہوا محسوس کرے۔ یو پی اے حکومت کا بحران اظہر من الشمس ہے اور اب وہ کانگریس کے بحران کی شکل اختیار کر چکا ہے۔ بوفورس گھوٹالے کے بعد ایسا پہلی مرتبہ ہوا ہے جب گاندھی خاندان پر براہِ راست بد عنوانی کے

Read more

ملک کے وزیر کیا ثابت کرنا چاہتے ہیں

کمل مرارکا
سپریم کورٹ کی ہدایت کے مطابق پھر سے ٹو جی اسپیکٹرم کی نیلامی ہو گئی ہے۔ جیسا کہ اندازہ لگایا جا رہا تھا، ٹھیک اسی طرح سرکار نے یہ دلیل دی ہے کہ اس بار کی نیلامی کے اچھے دام مل گئے ہیں اور سی اے جی کے ذریعے نقصان کی بات غلط تھی۔ مجھے نہیں معلوم کہ سرکار کی منشا کیا ہے اور اس سے وابستہ وزیر کیا ثابت کرنا چاہتے ہیں۔ کیا وہ لوگ 2008 یا 2009 کی لوٹ کو

Read more