کانگریس پارٹی ہندوستان کو اسرائیل کے حوالہ کیا

ڈاکٹر منیش کمار
کچھ دنوں پہلے ہندوستان کے وزیر خارجہ ایس ایم کرشنا کے ساتھ ملک کے کئی بڑے خفیہ اور اعلیٰ عہدیدار اسرائیل میں تھے۔ اسرائیلی میڈیا کے مطابق وہاں پر ان کا پرتپاک استقبال کیا گیا۔ بتایا گیا کہ حکومت ہند کی طرف سے یہ اب تک کا سب سے اعلیٰ سطحی دورہ تھا، ساتھ ہی سب سے کامیاب دورہ بھی۔ ہندوستانی حکومت اب تک اسرائیل کے ساتھ اپنے رشتے کو چھپاتی رہی ہے، لیکن وزیر خارجہ ایس ایم کرشنا نے اسرائیل کے ساتھ جس طرح معاہدہ کیا ہے، وہ چونکانے والا ہے۔ کانگریس حکومت نے بنگلور میں اسر

Read more

مرکز میں کانگریس کا مستقبل یو پی الیکشن طے کرے گا

روبی ارون
یہ سودے بازی ہے اقتدار کی۔ یہ ہوس ہے ہندوستان کی سیاست پر قبضہ کرنے اور اپنے اپنے وارثوں کے پھلنے پھولنے اور راج کرنے کی۔ اور یہ سازش ہے عام شہریوں کو فریب دینے کی۔ اس مقصد میں کامیاب ہونے کے لیے سماجوادی پارٹی اور کانگریس کو ہر نسخہ قبول ہے۔ لہٰذا، سماجوادی پارٹی اور کانگریس نے جگل بندی کر لی ہے۔ مرکز اور اتر پردیش کی گدی پر قابض ہونے کی خاطر یہ دونوں پارٹیاں اب ایک راہ پر چل پڑی ہیں۔ ان دونوں کے درمیان یہ قرار ہو چکا ہے کہ اتر پردیش میں دونوں ہی پارٹ

Read more

جنرل وی کے سنگھ نے فوج کی عظمت کو بچایا ہے

ڈاکٹر منیش کمار
ملک کی عدالتِعظمیٰ میں فوج اور حکومت آمنے سامنے ہے۔ آزادی کے بعد ہندوستانی فوج کا یہ سب سے شرمناک امتحان ہے، جس میں بری فوج کے سربراہ کے ادارہ کو حکومت داغدار کر رہی ہے۔ پہلی بار آرمی چیف اور حکومت کے درمیان موجود تنازع کافیصلہ عدالت میں ہوگا۔ تنازع بھی ایسا، جسے سن کر پوری دنیا میں ہندوستان کا مذاق اڑایا جا رہا ہے۔ یہ معاملہ آرمی چیف جنرل وجے کمار سنگھ کی تاریخ پیدائش کا ہے۔ اس معاملے میں ایک پی آئی ایل سپریم کورٹ کے سامنے ہے۔ وہاں کیا ہوگا، یہ پتہ نہیں، لیکن اس تنازع کو لے کر جو بھرم پھیلا یا جا رہا ہے، اسے سمجھنا ضروری ہے۔ چوتھی دنیا نے اِس تنازع پر تحقیقات کی۔ تقریباً چھ ماہ قبل ہم نے اِس تنازع

Read more

لوک پال بل پر سرکاری ڈرامہ

پانچ جون، 1975 کو پٹنہ کے گاندھی میدان میں لالو پرساد یادو نے کہا تھا کہ اس پارلیمنٹ کو آگ لگا دو۔ اگلے دن اخباروں نے اُن کے اسی جملے کو اس خبر کی سرخی بنائی۔ لالو یادو اُس وقت زمانۂ طالب علمی کے لیڈر تھے، نوجوان تھے اور جے پرکاش جی کی تحریک کے اہم رکن تھے۔ 29 دسمبر، 2011 کو لالو یادو واقعی پارلیمنٹ کو آگ لگانے کا کام کر رہے تھے۔ راجیہ سبھا میں دن بھر لوک پال بل پر بحث ہو تی رہی۔ سرکار کے پاس بل کو پاس کرانے کے لیے اکثریت نہیں تھی۔ رات نو بجے سے ایسی خبریں آنے لگیں کہ سرکار جان بوجھ کر ہنگامہ کرنے والی ہے۔ بحث کو طول دے کر 12 بجا دیا گیا اور پھر اجلاس غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی

Read more

کانگریس مسلمانوں کو ریزرویشن نہیں دینا چاہتی

ڈاکٹر منیش کمار
سیاست کا کھیل بھی بڑا عجیب ہے۔ اس کھیل میں ہر کھلاڑی سوچتا کچھ ہے، بولتا کچھ ہے اور کرتا کچھ اور ہی ہے۔ کیا کانگریس پارٹی واقعی مسلمانوں کو سرکاری نوکریوں میں ریزرویشن دینا چاہتی ہے یا پھر یہ صرف ایک انتخابی اسٹنٹ ہے۔ یہ ایک ایسا سوال ہے، جو ہر شخص کے من میں اٹھ رہا ہے۔ کانگریس اگر مسلمانوں کی ترق

Read more

نتیش جی گڈ گورننس کہاں ہے

سروج سنگھ
بہار کو آگے بڑھانے اور سنوارنے کا خواب صرف نتیش حکومت نے ہی نہیں دیکھا ہے، بلکہ یہ خواب ہر ایک بہاری کے دل میں گزشتہ چھ سالوں سے پل رہا ہے۔ انصاف کی پٹری پر تیزی سے ترقی کی دوڑتی گاڑی دیکھنا ایک ایسا خواب ہے، جسے ہر بہاری سجائے ہوا ہے اور چاہتا ہے کہ یہ جتنی جلدی ہو، حقیقت کا لبادہ پہن عام لوگوں کو دکھائی دینے لگے۔ لیکن یہ ایک تلخ حقیقت ہے کہ بدعنوانی کی زنجیریں ترقی کی گاڑی کا پہیہ پورے بہار میں روک رہی ہیں۔ بغیر ام

Read more

ٹوجی اسپیکٹرم گھوٹالہ:راجا آئیں گے باہر، مارن جائیں گے جیل!

روبی ارون
ٹوجی اسپیکٹرم گھوٹالہ معاملے میں منموہن – چدمبرم – سونیا نے خاموشی اختیار کر رکھی ہے اور ملک کے وزیر قانون سلمان خورشید چہرے پر بڑی سی مسکان چسپاں کیے ملک کے عام عوام کو گمراہ کرنے کی خاطر کہتے پھر رہے ہیں – آل اِز ویل۔ پر اس حقیقت سے وہ اور سرکار میں ان کے حلیف بھیسے بخوبی واقف ہیں

Read more

انا ہزارے! جائیں تو جائیں کہاں؟

مجاہد آزادی کے ساتھ بڑے قد آور لیڈر تھے۔ ایک بار وہ دیوی لال کے ساتھ کار میں جا رہے تھے۔ بیچ سڑک پر ایک کتا مرا پڑا تھا۔ پرتاپ سنگھ کیرو نے کار رکوائی اور دیوی لال سے پوچھا کہ بتاؤ کتا کیوں مرا؟ دیوی لال کو یہ سوال بڑا اَٹ پٹا سا لگا۔ انہوں نے کہا کہ کتے تو مرتے ہی رہتے ہیں، یونہی مر

Read more

سرکاری اور پارٹی میں دراڑ

وزیر اعظم منموہن سنگھ کو قریب سے جاننے والے اس بات سے بخوبی واقف ہیں کہ وہ جو بات کہتے ہیں، معنی اس کے نہیں ہوتے، بلکہ وہ جو نہیں کہتے ہیں مطلب اُس کا ہوتا ہے۔ گزشتہ سات سالوں کے دوران اگر اس بات سے سب سے زیادہ واسطہ کسی کا پڑا ہے، تو وہ ہیں کانگریس کی صدر سونیا گاندھی۔ حالانکہ منموہن سنگھ نے کبھی

Read more

سونیا منموہن آمنے سامنے

سونیا گاندھی اور منموہن سنگھ اس وقت آمنے سامنے کھڑے ہیں۔ پالیسیوں کے مسئلے میں، طریق کار کے مسئلے میں اور وِژن کے مسئلے میں بھی۔ منموہن سنگھ، چدمبرم اور پرنب مکھرجی، یہ ایک ٹیم ہے۔ اس ٹیم میں سلمان خورشید اور کپل سبل بھی شامل ہیں۔ مزے کی بات یہ ہے کہ جنہیں راہل گاندھی یا سونیا گاندھی پس

Read more