تیسرا محاذ : کیسی ہوگی اس کی شکل وصورت ؟

سنتوش بھارتیہ
لوک سبھا میں ایف ڈی آئی کے مدعے پر دو پارٹیوں نے جو کیا، یہ مستقبل کی ممکنہ سیاست کا اہم اشارہ مانا جا سکتا ہے۔ شاید پہلی بار ملائم سنگھ اور مایاوتی کسی ایشو پر یکساں سوچ رکھتے ہوئے، ایک طرح کا ایکشن کرتے دکھائی دیے۔ یہ ماننا چاہیے کہ اب یہ تصور ناممکن نہیں ہے کہ چاہے اتر پردیش کا چار سال کے بعد ہونے والا اسمبلی الیکشن ہو یا پھر ملک کی لوک سبھا کا آئندہ انتخاب، یہ

Read more

یہ عام آدمی کی پارٹی ہے

ڈاکٹر منیش کمار
ہندوستانی سیاست کا یہ ایک شرمناک پہلو ہے کہ ملک کی قومی اور صوبائی پارٹیوں کی کمان چند خاندانوں تک محدود ہو کر رہ گئی ہے۔ اگر ایسا ہی چلتا رہا تو ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہو جائے گا۔ سیاسی پارٹیوں اور ملک کے نام نہاد عظیم لیڈروں کی مہربانیوں سے یہ خطرہ اب ہمارے دروازے تک پہنچ چکا ہے، لیکن وہ ملک کے عوام کا مذاق اڑا رہے ہیں۔ کوئی ووٹ

Read more

اندرونی سازش کا شکار بی جے پی

سنتوش بھارتیہ
بھارتیہ جنتا پارٹی کی سیاست کو بغیر سمجھے آنے والے وقت میں کیا ہوگا، اس کا اندازہ نہیں لگایا جاسکتا۔ بھارتیہ جنتا پارٹی پارلیمنٹ میں اہم اپوزیشن پارٹی ہے اور کئی صوبوں میں اس کی سرکاریں ہیں۔ اس کے باوجود بھارتیہ جنتا پارٹی، جو 2014 کے انتخاب میں دہلی کے تخت پر داؤ لگانے والی ہے، اس وقت سب سے زیادہ پریشان دکھائی دے رہی ہے۔یشونت سنہا، گرو مورتی، ارون جیٹلی،

Read more

گجرات الیکشن: کانگریس کے ایجنڈے میں مسلمان ہیں ہی نہیں

گجرات کا انتخاب صرف کانگریس اور بی جے پی کی لڑائی نہیں ہے۔ گجرات انتخاب پر پوری دنیا کی نظر ہے۔ گجرات انتخاب ہندوستان کے مستقبل کو طے کرے گا۔ اس سے یہ طے ہوگا کہ ہندوستان میں سیکولر ازم زندہ ہے یا پھر ہمارے ملک کے لوگوں نے کمیونلزم کو قومی زندگی کا ایک حصہ مان لیا ہے۔ نریندر مودی ایک ایسی سیاست کی رہنمائی کرتے ہیں، جو ہندوتوا کی راہ پر گامزن ہے۔ اس میں ہر فرقہ کے لوگوں کے درمیان یکسانیت کی جگہ نہیں ہے۔ لیکن ایسی طاقتوں سے لڑنے والا کون ہے؟ یہ ذمہ داری ملک کے عوام نے کانگریس کو دی ہے، لیکن کانگریس اس ذمہ داری کو نبھانے میں ناکام رہی ہے۔ اس الیکشن میں کانگریس نے گجرات فسادات کو کیوں بھلا دیا؟ اسے اہم مدعا کیوں نہیں بنایا؟

Read more

اڑتالیس لاکھ کروڑ کا مہا گھوٹالہ :تھوریم گھوٹالہ

منیش کمار
جب سے یو پی اے سرکار بنی ہے، تب سے ملک میں گھوٹالوں کا تانتا لگ گیا ہے۔ ملک کے لوگ یہ ماننے لگ گئے ہیں کہ منموہن سنگھ کی سرکار گھوٹالوں کی سرکار ہے۔ ایک کے بعد ایک بڑے گھوٹالے سامنے آ رہے ہیں۔ چوتھی دنیا نے جب 26 لاکھ کروڑ کے کوئلہ گھوٹالے کا پردہ فاش کیا تھا، تب کسی کو یہ یقین بھی نہیں ہوا تھا کہ ملک میں اتنے بڑے گھوٹالے کو انجام دیا جاسکتا ہے۔ آج ہم

Read more

جمہوریت کو بچانے کا وقت آ گیا

سنتوش بھارتیہ
ہندوستان میں جمہوریت کی اتنی خراب حالت آزادی کے بعد کبھی نہیں ہوئی تھی۔ پارلیمانی جمہوریت میں سیاسی پارٹیوں کا بہت اہم مقام ہے، لیکن المیہ یہ ہے کہ آج پارلیمانی جمہوریت کو چلانے والی ساری پارٹیوں کا کردار تقریباً ایک جیسا ہو گیا ہے۔ چاہے کانگریس ہو یا بھارتیہ جنتا پارٹی یا دیگر سیاسی پارٹیاں، جن کی نمائندگی پارلیمنٹ میں ہے یا پھر وہ سبھی جو کسی نہ کسی ریاست میں برسر اقتدار

Read more

اس ملک کی گندگی ایک کیجریوال سے نہیں جائے گی

ڈاکٹر منیش کمار
دوسال پہلے تک جے پرکاش تحریک اور بد عنوانی کے خلاف وی پی سنگھ کی تحریک میں حصہ لینے والے لوگ بھی یہ کہتے تھے کہ زمانہ بدل گیا ہے ۔اب ملک میں کچھ نہیں ہو سکتا۔ آج کے نوجوان تحریک نہیں چلا سکتے۔ ملک میں اب کوئی بھی تحریک ممکن نہیں

Read more

یو پی اے حکومت کا ایک اور گھوٹالہ

ڈاکٹر منیش کمار
آنے والے دنوں میں یو پی اے حکومت کی پھر سے کرکری ہونے والی ہے۔ 52 ہزار کروڑ روپے کا نیا گھوٹالہ سامنے آیا ہے۔ اس گھوٹالے میں غریب کسانوں کے نام پر روپیوں کی بندر بانٹ ہوئی ہے۔ کسانوں کے قرض کو معاف کرنے والی اسکیم میں گڑبڑی پائی گئی ہے۔ اس اسکیم کا فائدہ ان لوگوں نے اٹھایا، جو اس کے اہل نہیں تھے۔ اس اسکیم سے غریب کسانوں کو فائدہ نہیں ملا۔ حیران کردینے

Read more

یہ رشوت نہیں تو کیا ہے؟

کمل ایم مرارکا
نئی نئی بنی سیاسی پارٹی (اروِند کجریوال کے ذریعے اعلان کردہ) نے سونیا گاندھی کے داماد رابرٹ واڈرا پر ایک ساتھ کئی الزامات لگائے ہیں۔ ان تمام الزامات میں کئی چیزیں شامل ہیں اور اس میں کئی حقائق اور اعداد و شمار بہت ہی بڑے ہیں۔ لیکن ان سب کے درمیان اگر بات اصولوں کی کی جائے تو دو چیزیں بالکل واضح ہیں۔ پہلا یہ کہ رابرٹ واڈرا کی کل پہچان یہی ہے کہ وہ سونیا گاندھی کے داماد

Read more

کانگریس کے ایجنڈے سے سماجواد غائب

کمل ایم مرارکا
حال ہی میں ملک میں ہوئے بدلائو نے ایک بنیادی سوال پوچھنے کے لئے مجبور کر دیا ہے۔ سوال یہ ہے کہ آخر یہ ملک کس کا ہے؟سرکار کے ذریعہ ملک کے لئے بنائی گئی اقتصادی پالیسیاں اور سیاسی ماحول سماج کے کس طبقے کے لوگوں کے فائدے کے لئے ہونے چاہئیں؟ لازمی طور پر یہی جواب ہوگا کہ سرکار کو ہر طبقے کا خیال رکھنا چاہئے۔ آج بھی ملک کے ساٹھ فیصد لوگ کھیتی پر

Read more
Page 20 of 34« First...10...1819202122...30...Last »