آئیڈل ہندوستان کی علامت ، انا کی تاریخی ریلی

سنتوش بھارتیہ
آخر کس واقعہ کو تاریخی کہیں گے؟ وہ کون سے عناصر ہیں، جو کسی واقعہ کو تاریخی بناتے ہیں؟ تاریخی لفظ زبان پر لانا آسان ہے، لیکن تاریخی واقعہ کے تاریخی اسباب بھی ہونے چاہئیں۔ جب مجھ سے 30 جنوری کی شام پٹنہ میں ایک سینئر صحافی نے کہا کہ آج پٹنہ میں ایک نئی تاریخ رقم ہوتے دیکھی، تو میں نے اس سے پوچھا، کیسے؟ اس نے کہا کہ 40 سال پہلے لوک نائن جے پرکاش نارائن کے وقت ہم نے دیکھا تھا کہ کس طرح اپنے پیسے سے نہ صرف جھومتے ہوئے، بلکہ پرجوش ہو کر غریب اور نوجوان نظام میں تبدیلی کا نعرہ لے کر اکٹھے ہوتے تھے۔ انھوں نے یہ بھی یاد دلایا کہ جے پرکاش جی جب گاندھی میدان آتے تھے یا چار نومبر کو آئے تھے، تو کس طرح

Read more

راج ناتھ کے لئے کانٹوں بھرا تاج

ڈاکٹر منیش کمار
لگتا ہے بھارتیہ جنتا پارٹی وبالِ جان پارٹی بن گئی ہے، ورنہ ایسی کیا بات ہے کہ جب بھی کانگریس کی غلطیوں کی وجہ سے بھارتیہ جنتا پارٹی کے حق میں ماحول بنتا دکھائی دیتا ہے، تو الیکشن سے ٹھیک پہلے کچھ نہ کچھ ایسا ضرور ہو جاتا ہے، جس کی وجہ سے سب کچھ چوپٹ ہو جاتا ہے۔ اٹل جی کی سرکار نے شاندار کام کیا، لیکن پھر بھی بی جے پی

Read more

انا کی تحریک : مسلم سماج کو بھی بدلنے کی تحریک ہے

سنتوش بھارتیہ
ملک میں نئے سیاسی حالات پیدا ہو رہے ہیں۔ لیکن اس کے اوپر ممبئی، کولکاتہ، چنئی اور بنگلور میں بیٹھے بڑے پیسے والے اور دہلی سمیت صوبائی راجدھانیوں میں بیٹھے سیاست چلانے والے سیاسی لیڈر دھیان نہیں دے رہے ہیں۔ میں نہ نکسل واد کی وکالت کر رہا ہوں، نہ ماؤ واد کی اور نہ بغاوت کی۔ لیکن مجھے لگتا ہے کہ جیسے حالات پیدا ہو رہے ہیں،

Read more

ملک کو بدعنوانی سے آزاد کرائو، پٹنہ چلو

ڈاکٹر منیش کمار
ملک کی جمہوریت خطرے میں ہے۔ ملک چلانے والوں نے جھوٹ بولنے، دھوکہ دینے اور اخلاقیات کی تمام حدیں پار کر نے کو ہی سیاست سمجھ لیا ہے۔ اس کا نتیجہ یہ ہے کہ پارلیمنٹ میں لیڈر جھوٹ بولنے لگے ہیں۔ اور تو اور پارلیمنٹ میں اتفاق رائے سے بل پاس کرنے کے باوجود عوام کے ساتھ دھوکہ کیا جانے لگا ہے۔ سرکار ایسی ایسی پالیسیاں بنا رہی ہے، جن سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ آئین کو ہی طاق پر رکھ دیا گیا ہے۔ چیف منسٹر کا بیٹا چیف منسٹر، منسٹر

Read more

اب اس طوفان کو روکنا مشکل ہے

ڈاکٹر منیش کمار
ایک بار لکھنؤ میں وزیر اعلیٰ کے دفتر کے باہر زبردست مظاہرہ ہوا۔ یہ لوگ پوروانچل کے الگ الگ شہروں سے لکھنؤ پہنچے تھے۔ احتجاجیوں کی تعداد تقریباً 1500 رہی ہوگی۔ اس میں کسان، مزدور اور اسٹوڈنٹ لیڈر بھی تھے، جو اپنی تقریروں میں وزیر اعلیٰ کے خلاف آگ اگل رہے تھے۔ یہ سب اپنی تقریروں میں سیدھے وزیر اعلیٰ پر نشانہ لگا رہے تھے۔ اس مظاہرہ کی قیادت سماجوادی لیڈر

Read more

انڈین ایکسپریس کی صحافت۔2

ڈاکٹر منیش کمار
اگر کوئی اخبار یا ایڈیٹر کسی کے ڈرائنگ روم میں تاک جھانک کرنے لگ جائے اور غلط یا فرضی کہانیاں شائع کرنی شروع کر دے تو ایسی صحافت کو بزدلانہ صحافت ہی کہا جائے گا۔ حال ہی میں انڈین ایکسپریس نے ایک اسٹوری شائع کی تھی، جس کا عنوان تھا ’’سیکریٹ لوکیشن‘۔ یہ اس اخبار میں شائع ہونے والے مستقل کالم ’’Delhi Confidential‘‘کا ایک حصہ تھا۔ اس اسٹوری کو پڑھ کر

Read more

انڈین ایکسپریس کی صحافت ۔1

ڈاکٹر منیش کمار
ہندوستانی فوج کی ایک یونٹ ہے ٹیکنیکل سروس ڈویژن۔ یہ دوسرے ملکوں میں کووَرٹ آپریشن کرتی ہے۔ اس ڈویژن کی اہمیت کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ ہندوستان کی یہ واحد یونٹ ہے، جس کے اندر خفیہ طریقے سے آپریشن کرنے کی صلاحیت ہے۔ اسے وزیر دفاع کی منظوری سے بنایا گیا تھا، کیوں کہ راء اور آئی بی جیسے اداروں کی صلاحیت کم ہو گئی تھی۔ یہ اتنی اہم یونٹ ہے کہ

Read more

تیسرا محاذ : کیسی ہوگی اس کی شکل وصورت ؟

سنتوش بھارتیہ
لوک سبھا میں ایف ڈی آئی کے مدعے پر دو پارٹیوں نے جو کیا، یہ مستقبل کی ممکنہ سیاست کا اہم اشارہ مانا جا سکتا ہے۔ شاید پہلی بار ملائم سنگھ اور مایاوتی کسی ایشو پر یکساں سوچ رکھتے ہوئے، ایک طرح کا ایکشن کرتے دکھائی دیے۔ یہ ماننا چاہیے کہ اب یہ تصور ناممکن نہیں ہے کہ چاہے اتر پردیش کا چار سال کے بعد ہونے والا اسمبلی الیکشن ہو یا پھر ملک کی لوک سبھا کا آئندہ انتخاب، یہ

Read more

یہ عام آدمی کی پارٹی ہے

ڈاکٹر منیش کمار
ہندوستانی سیاست کا یہ ایک شرمناک پہلو ہے کہ ملک کی قومی اور صوبائی پارٹیوں کی کمان چند خاندانوں تک محدود ہو کر رہ گئی ہے۔ اگر ایسا ہی چلتا رہا تو ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہو جائے گا۔ سیاسی پارٹیوں اور ملک کے نام نہاد عظیم لیڈروں کی مہربانیوں سے یہ خطرہ اب ہمارے دروازے تک پہنچ چکا ہے، لیکن وہ ملک کے عوام کا مذاق اڑا رہے ہیں۔ کوئی ووٹ

Read more
Page 20 of 35« First...10...1819202122...30...Last »