علی گڑھ مسلم یونیورسٹی پاپا میاں کی بچیاں آگے بڑھ رہی ہیں

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو ) کا ذہن میں نام آتے ہی دو عظیم شخصیتیں یاد آجاتی ہیں۔ ایک سرسید تو دوسری شیخ عبد اللہ عرف پاپا میاں ۔ سر سید کو یہ کریڈٹ جاتا ہے کہ انہوں نے عصری تعلیم کا سب سے بڑا مرکز مسلمانوں کو دیا جبکہ کشمیر کے رہنے والے مہتہ گرمکھ سنگھ کے بیٹے ٹھاکر داس جو کہ 1891 میں مسلمان بن جانے کے بعد شیخ عبد اللہ عرف پاپا میاں بنے، نے اس تعلیم گاہ سے بچیوں کی تعلیم کو جوڑا اور اسے پروان چڑھایا۔ یہاں واقع ان کے نام پر عبد اللہ کالج اور عبد اللہ ہاسٹل مسلسل ان کی یاد دلاتا ہے۔

Read more