کیسریا ساگر دیکھ کے پوار میدان چھوڑ گئے: وزیر اعظم مودی

Share Article

 

مہاراشٹر کے سابق وزیر اعلیٰ اور این سی پی سربراہ شرد پوار کے گڑھ بارامتی اور ماڑھا لوک سبھا حلقہ میں بدھ کے روز وزیر اعظم نریندر مودی نے عوامی ریلی کی۔ اس دوران انہوں نے ایک بار پھر شرد پوار پر نشانہ لگایا۔

 

Image result for sharad pawar

 

پی ایم مودی نے پنڈھ پور کے وٹھل نام کویاد کرتے ہوئے مراٹھی میں تقریر شروع کئی، ‘ایئر کنڈیشن میں بیٹھنے والوں کو سمجھ میں نہیں آتا کہ زمینی حقیقت کیا ہے؟کیسریاساگر دیکھ پوار بھی میدان چھوڑ کر نو دو گیارہ ہو گئے۔ وہ ہوشیار لیڈر ہیں۔ ہوا کا رخ دیکھ کر بھانپ لیتے ہیں۔ مرکز میں مضبوط حکومت چاہئے اور مضبوط ملک کے لئے یہ ضروری ہے‘۔
مودی نے کہا کہ ملک کے عوام خود مودی کے کاموں کی تشہیر کرتے ہیں۔ مودی کو ووٹ دینے کی اپیل کرتے ہیں ۔ پانچ سال میں ایک بھی کرپشن نہیں ہوا ہے۔ انہوں نے کالے دھن اور بدعنوانی کے خلاف سخت اقدامات کئے ہیں۔ ساڑھے تین لاکھ فرضی کمپنیوں کو بند کرا دیا۔ کانگریس این سی پی کی ماہا ملاوٹ اتحاد مجبور ہے۔ ان کے ہاتھ میں ملک کو نہ سونپیں۔ مودی نے بالاکوٹ حملے کو اپنی کامیابی قرار دیتے ہوئے کہا کہ رہنماؤں میں دم ہوتا ہے تو فوجیوں کے ہاتھ چلتے ہیں۔ اپوزیشن فوج پر سوال اٹھا رہا ہے، لیکن مودی چوکیدار ان کے درمیان کھڑا ہے۔ ان کے منصوبے کامیاب نہیں ہونے دے گا۔

 

 

اکلج میں منعقد ہ انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نریندر مودی نے بی جے پی-شیوسینا کے امیدوار رنجیت سنگھ نمبالکر کو ووٹ دینے کی اپیل کی۔ انہوں نے وجے سنگھ موہتے پاٹل کے 75 سال مکمل کرنے پر مبارک باد دی۔ اس سے پہلے بی جے پی نے اپنی طاقت کامظاہرہ کیا۔ اس موقع پر دیویندر فڈنویس نے کہا کہ ماڑھا کے لوگوں نے شرد پوار کو مسترد کردیا، اس لئے انہوں نے الیکشن نہیں لڑنے کا فیصلہ کیا۔فڈنوس نے اپنی حکومت کی کامیابیوں کو گناتے ہوئے کہا کہ تعلقہ میں آبپاشی منصوبہ شروع کیا، جس سے 50 ایکڑ زمین آبپاشی کے لائق ہو گئی۔ کرشنا بھیما یوجنا کے لئے 37000 کروڑ کی منصوبہ بندی شروع کی جائے گی۔ ملسی یوجنا سے بھی ماڑھا کے لئے آبپاشی اور بجلی فراہم کی جائے گی۔ شکر فیکٹریوں کو شروع کیا گیا، جس سے گنا کسانوں کو فائدہ ہوا ہے۔

 

 

ماڑھا حلقہ کے امیدوار رنجیت سنگھ نمبالکر نے عوام سے خود کو کامیاب بنانے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ایم پی بننے کے بعد وہ کسانوں کے مسائل کے ساتھ ساتھ آب پاشی بحران کو دور کرنے کی کوشش کریں گے۔ انہوں نے اپنے والد ہندورائو نمبالکر کی خدمات کو یاد کرتے ہوئے کہا کہ ان کے ہی کوششوں سے کرشنا کھورے آبپاشی منصوبہ کو پورا کیا جا سکا ہے، لیکن اس کا فائدہ بارامتی کو زیادہ ہوا ہے۔ ماڑھا کے لوگوں کو کوئی فائدہ نہیں ملا ہے۔ انہوں نے یقین ظاہر کیا کہ ماڑھا کی سیٹ بی جے پی ہی جیتے گی۔
بارامتی کی امیدوار کانچن کل بھی اس موقع پر موجود تھیں۔ انہوں نے کہا کہ عوام کی ترقی پر زور دیا جائے گا۔ پارٹی نے جو اعتماد ظاہر کیا ہے، اس پر کھری اتریںگی۔ رام داس قدم نے بھی بی جے پی شیوسینا اتحاد کے امیدوار کو کامیاب بنانے کی اپیل کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ دھنگر سماج کو ریزرویشن کا فائدہ دیا جائے گا۔ آبپاشی مسئلہ کو دور کیا جائے گا۔ روزگار کے لئے صنعتیں لگائی جائیں گی۔ اس کے لئے مرکز میں مضبوط حکومت ہونی چاہئے۔
اسٹیج پر موجود تمام رہنماؤں نے شرد پوار کا نام نہ لیتے ہوئے ان پر حملہ کیا۔ وجے سنگھ موہتے پاٹل، رنجیت سنگھ موہتے پاٹل، اتم رائو، رام داس قدم سمیت کئی لوگ اس موقع پر موجود تھے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *