براڑی معاملے کی پوسٹ مارٹم رپورٹ:سبھی کی موت لٹکنے کی وجہ سے ہوئی

Share Article
burari-deaths
دہلی کے براڑی میں ایک ہی خاندان میں 11لوگوں کی موت کے معاملے جن 6لوگوں کا آج پوسٹ مارٹم ہواہے ۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں موت کی وجہ ہینگنگ (لٹک کرخودکشی )ہے۔اس کے علاوہ کوئی چوٹ کے نشانات نہیں ہیں۔سبھی 11مرنے والوں کے آنکھوں کوان کے رشتے دارکے کہنے پر دان کردیاگیا۔ بتایارہاہے کہ اب پوسٹ مارٹم کے بعد سبھی کے آخری رسومات ایک ساتھ کشمیری گیٹ کے پاس نگم بودھ گھاٹ پراداکی جائے گی، کیونکہ اتنی لاشوں کوایک ساتھ راجستھان آبائی وطن لے جانا آسان نہیں ہے۔
بہرکیف پولس کے سامنے اب بھی بڑاسوال بناہواہے کہ یہ معاملہ خودکشی ہے یاقتل؟ اب تک پولس جانچ میں مذہبی نقط�ۂ نظرسے دیکھ رہی ہے۔پولس ذرائع کے مطابق، جہاں 10لوگوں کے لاشیں لٹکی ہوئی ملیں، اس کے پاس ہی ایک کمرے میں سے دورجسٹربرآمدہوئے ہیں، جس طرح سے موت ہوئی ہے وہی طریقہ دونوں رجسٹرمیں لکھاگیاہے ،جس میں منھ باندھنے اورہاتھ باندھنے کا بھی ذکرہے۔پولس ذرائع کے مطابق، دونوں رجسٹرمیں موت اور’موکچھ‘ کولیکرایک لمبی تحریرہے، جس میں کسی روحانی گروکانام نہیں ہے۔لیکن موت کی عمل کولیکربڑاحصہ ہے۔پولس یہ پتالگنے کی کوشش کررہی ہے کہ رجسٹرمیں لکھی ہینڈ رائٹنگ خاندان میں سے کس کی ہے۔کرائم برانچ معاملے کی تہہ تک جانے میں ہے۔خیال رہے کہ دہلی کے براڑی علاقے میں یکم جولائی اتوارکوصبح ایک ہی گھر سے 11 لاشیں برآمد ہوئی تھی۔ مرنے والوں میں سات خواتین اور چار مرد شامل ہیں۔ تمام لاشیں گھر کے اندر لٹکی ہوئی ملی اور کچھ کے منہ اور آنکھوں پر پٹی بندھی ہوئی تھی۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *