برندا کرات اور سبھاشنی علی متاثرہ طالبہ سے ملاقات کرنے شاہ جہاں پور جیل پہنچیں

Share Article

 

۔ چنمیانند معاملے میں اکھلیش کا طنز، بی جے پی کا بیٹی بچاؤ مہم جملہ

سابق مرکزی وزیر داخلہ چنمیانند سے پانچ کروڑ روپے کی رنگداری مانگنے کے الزام میں جیل بھیجی گئیلاء طالبہ سے ملنے جمعرات کے روز راجیہ سبھا ممبر پارلیمنٹ برندا کرات اورلوک تانترک مہیلاسنگھ کی صدر سبھاشنی علی شاہ جہاں پور جیل پہنچیں۔ چنمیانند سے رنگداری مانگنے کے معاملے میں ایس آئی ٹی نے بدھ کے روزعصمت دری کی شکارطالبہ کو گرفتار کر عدالت میں پیش کیا تھا جہاں سے کورٹ نے اسے 14 دن کی عدالتی حراست میں جیل بھیج دیا تھا۔

سوامی چنمیانند پر آبروریزی کا الزام لگانے والی لگانے والی طالبہ کی گرفتاری کو لے کر سماج وادی پارٹی (ایس پی) کے صدر اور ریاست کے سابق وزیر اعلیٰ اکھلیش یادو نے (بھارتیہ جنتا پارٹی) بی جے پی پر طنز کیا ہے۔ اکھلیش نے جمعرات کے روز ٹویٹ کیا کہ بی جے پی لیڈر کے خلاف جرات دکھاتے ہوئے آواز اٹھانے والی بیٹی کو ہی جیل بھیج کر بی جے پی نے اپنا اصلی چہرہ دکھا دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج ملک کی ہر بیٹی، بہن اور ماں بی جے پی کی اس شرمناک حرکتسے دکھی ہے اور لوگ کہہ رہے ہیں ’ملک میں سب اچھاہے‘-قابل مذمت۔ اکھلیش نے کہا کہ ’بیٹی بچاؤ‘بھی آخر کار ایک جملہ ہی ثابت ہوا۔

اس معاملے کو لے کر کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے بھی حکومت پر طنز کیاہے۔ انہوں نے اناؤ اور شاہ جہاں پور معاملے کو لے کر آج ٹویٹ کیا۔ اناؤ عصمت دری کیس: متاثرہ کے والدکا قتل۔ متاثرہ کے چچا گرفتار۔ شدید عوامی دباؤ کے بعد واقعہ کے 13 ماہ بعد ملزم رکن اسمبلی گرفتار۔ متاثرہ کے خاندان کو جان سے مارنے کی کوشش ۔ اسی طرح شاہ جہاں پور عصمت دری کیس: متاثرہ گرفتار۔ متاثرہ کے خاندان پر دباؤ۔ پرینکا نے الزام لگایا کہ ملزم بی جے پی لیڈر کو پولیس نے جان بوجھ کر گرفتار کرنے میں تاخیر کی۔ عوامی دباؤ پڑنے کے بعد گرفتار کیا۔ ملزم بی جے پی لیڈر پر اب تک عصمت دری کا چارج تک نہیں لگایا ہے۔ واہ رے بی جے پی کا انصاف؟۔

چنمیانند سے رنگداری مانگے جانے کے معاملے میں ایل ایل ایم کی طالبہ کو بدھ کے روز گرفتار کرتے ہوئے جیل بھیج دیا گیا ہے۔ اس نے ایس آئی ٹی کے سامنے اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ جس گاڑی میں پانچ کروڑ کی رنگداری والا میسج بھیجے جانے کو لے کر چرچہ کا ویڈیو وائرل ہوا ہے، اس میں وہ موجود تھی۔ رنگداری مانگے جانے کے معاملے میں ملزم سنجے سنگھ، سچن عرف سونو، وکرم کو پہلے ہی گرفتار کیا جا چکا ہے ۔ایس آئی ٹی کے مطابق سچن اور وکرم نے ریمانڈ پر رنگداری کیس میں طالبہ کااہم رول ہونے کی بات کہی ہے۔ ایس آئی ٹی کی تفتیش میں کئی ٹول ٹیکس بیریر پر طالبہ اور اس کے ساتھیوں کی موجودگی، ہوٹلوں میں موجودگی اور سی ڈی آر کے سلسلے میں بھی ثبوت ملے ہیں۔ اس کے بعد ہی طالبہ کو حراست میں لے لیا گیا۔ کورٹ میں پیشی کے بعد اسے جیل بھیج دیا گیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *