شادی کے منڈپ میں دولہا کے واٹس ایپ پر آئی دلہن کی نیوڈ تصویر، ٹوٹ گئی شادی

Share Article

delhi-demo

ملک کی راجدھانی دہلی سے ایک حیرت انگیز معاملہ سامنے آیا ہے۔ جہاں شادی کے منڈپ میں پھیرے سے پہلے دولہا کے واٹس ایپ( WhatsApp) پر دلہن کی نیوڈ(برہنہ) تصویر آنے کے بعد وہ شادی ٹوٹ گئی ہے۔ معاملہ دہلی کے لونی علاقہ کاہے۔ جہاں ایک دولہا نے موبائل پر آئی تصویر دیکھا تو اس کے ہوش اڑ گئے۔دولہا کے موبائل پر ایک نوجوان نے دلہن کی قابل اعتراض نیوڈ(برہنہ) تصاویر بھیج دی تھیں۔

جس کے بعد دولہا -دلہن میں جم کر تنازعہ ہوا اور معاملہ تھانے جا پہنچا۔اس کے بعد دولہا پارٹی کے کچھ لوگوں کو حراست میں لے لیا گیا۔ملیجانکاری کے مطابق، لونی کی ایک کالونی میں فرید آباد سے بارات آئی تھی۔ دھوم دھام سے جے مالا کی رسم پوری ہوئی۔ پھر رات تقریبا دو بجے دولہا دلہن پھیروں کے لئے منڈپ میں پہنچے۔یہاں دولہا نے اپنا موبائل آن کیا۔ اس نے دیکھا کہ وہاٹس ایپ گروپ پر ایک نوجوان نے دلہن کی نیوڈ تصاویر اپ لوڈ کی تھیں۔

اس کے بعد دولہا واٹس ایپ گروپ پر نوجوان سے لڑنے لگا۔ پھر اس نے دلہن کی ننگی تصویر جب اس کے گھر والوں کو دکھائی تو ان کے بھی ہوش اڑ گئے۔ دونوں میں جم کر تنازعہ ہو گیااسکے بعد دلہن پارٹی کے لوگ شادی میں خرچ ہوئے پیسے کا مطالبہ کرنے لگے۔ انہوں نے پولیس کو موقع پر بلا لیا۔پولیس دولہا، اس کے والد اور کئی رشتہ داروں کو لونی بارڈر تھانے لے آئی۔

اس کے باوجود دلہن پارٹی کے لوگ نہیں مانے۔وہ پیسے واپس لینے کے لئے تھانے پہنچ گئے۔ بدھ دوپہر بعد جب دولہا فریق نے سگائی کے وقت کا خرچ کو واپس دینے کی رضامندی ظاہر کی تب جاکر معاملہ ٹھنڈا ہوا۔

پولیس نے بتایا کہ دلہن کی شادی لونی کے ہی ایک نوجوان سے پانچ سال پہلے طے ہوئی تھی۔ ان روکا بھی ہوا۔لیکن رشتہ ٹوٹ گیا۔ اس دوران نوجوان اور دلہن میں جسمانی تعلقات بنے۔ اس دوران نوجوان نے دلہن کی بہت نیوڈ تصاویر بھی لی۔

نوجوان نے ایک بار پھر دلہن کے خاندان والوں سے شادی کی بات چلائی، لیکن وہ نہیں مانے۔ اس دوران دلہن دوسرے نوجوان سے شادی کے لئے راضی ہو گئی۔ اس سے ناراض نوجوان نے دولہا کے موبائل پر دلہن کی نیوڈتصاویر بھیج دیں۔ پولیس فحش تصاویر بھیجنے والے نوجوان کی تلاش کر رہی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *