فولادی سٹہ بازار کا دعویٰ،مودی کو ملیں گی 260 سے زیادہ سیٹیں،کانگریس پر بھی نظر!

Share Article
satta-market-BJP

لوک سبھا انتخابات کی تاریخوں کے اعلان کے بعد ملک میں سیاسی ماحول گرم ہے، تمام پارٹیاں اپنی اپنی جیت کے دعوے کر رہی ہیں، ایسے میں فولادی سٹہ بازار نے بھی لوک سبھا انتخابات کو لے کر تجزیہ کیا ہے، جسے 2019 لوک سبھا انتخابات کے نتائج کی پیشین گوئی کے طور پر دیکھا جا رہا ہے، جس میں بی جے پی کو 260 سے زیادہ سیٹیں ملنے کا اندازہ ظاہر کیا گیا ہے۔

فولادی سٹہ بازار کے مطابق جموں وکشمیر کے پلوامہ میں سی آر پی ایف پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کے بعد پاکستان کے بالاکوٹ میں ہوئی ایئر اسٹرائک سے پی ایم مودی کی پوزیشن مضبوط ہوئی ہے، اس کے سبب این ڈی اے سٹوریوں کی فیورٹ بنی ہوئی ہے، انہیں امید ہے کہ لوک سبھا انتخابات میں این ڈی اے کو 310-320 سیٹیں مل سکتی ہیں۔

وہیں دوسری طرف کانگریس کو لے کر سٹہ بازار میں جوش نظر نہیں آ رہاہے۔ پاکستان کے بالاکوٹ میں ہوئی ایئر اسٹرائک کا اثر سب سے زیادہ کانگریس پر پڑا ہے۔ فولادی سٹہ بازار نے دعویٰ کیا ہے کہ کانگریس 60-65 سیٹوں پر سمٹ کر رہ جائے گی، ساتھ ہی فولادی سٹہ بازار کے تازہ تجزیہ کے مطابق راجستھان کی 20 لوک سبھا سیٹوں پر بی جے پی کو جیت حاصل کر سکتی ہے۔

غور طلب ہے کہ فولادی سٹہ بازار کو ایشیا کے سب سے بڑا سٹہ بازار کے طور پر جانا جاتا ہے۔ لوک سبھا ضمنی انتخاب کے نتائج کے ٹھیک پہلے بھیفولادی سٹہ بازار نے راجستھان کی تینوں سیٹوں پر کانگریس کی جیت کے اشارہ دے دیے تھے جو نتائج آنے کے بعد سچ ثابت ہوئے۔

حالانکہ 2019 لوک سبھا انتخابات کو لے کر سٹہ بازاروں میں کس پارٹی پر کتنا داو پر لگا ہے اس کا انکشاف نہیں ہوا ہے، بدلے ہوئے حالات میں بی جے پی سٹوریوں کی پہلی پسند بتائی جا رہی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *