بی جے پی کے شترو 28 مارچ کو تھامیں گے کانگریس کا ہاتھ:ایم پی اکھلیش سنگھ

Share Article
shatrughan

بی جے پی شترو اور پٹنہ صاحب سے ممبر پارلیمنٹ شتروگھن سنہا 28 مارچ کو کانگریس میں شامل ہوں گے۔ کافی دن پہلے ہی ان کا کانگریس میں شامل ہوناطیہو گیا تھا، لیکن آج اس پر مہر بھی لگ گئی۔ پیر کو بہار کانگریس مہم کمیٹی کے صدر اور راجیہ سبھا ممبر پارلیمنٹ اکھلیش پرساد سنگھ نے پٹنہ میں صحافیوں سے بات چیت میں صاف کر دیا تھا کہ اسی ہفتے سنہا کانگریس میں شامل ہوں گے۔
بی جے پی میں رہ کر لگاتار وزیر اعظم نریندر مودی اور حکومت پر تنقید کرنے کی وجہ سے پارٹی نے اس بار شتروگھن سنہا کو ٹکٹ نہیں دیا ہے۔ سنہا کی جگہ پارٹی نے مرکزی وزیر روی شنکر پرساد کو پٹنہ صاحب سے ٹکٹ دیا ہے۔

روی شنکر اور سنہا دونوں ہی کایستھ طبقے سے آتے ہیں۔ اس سیٹ پر اس طبقے کے ووٹر بڑی تعداد میں ہیں۔ اتوار کو شتروگھن سنہا نے ٹویٹ کر کے صاف کر دیا تھا کہ وہ جلد ہی کانگریس میں شامل ہونے والے ہیں۔ سنہا نے ٹویٹ کیا تھا، کانگریس مشتمل ہندوستان کا وقت آ گیا ہے۔

بتا دیں کہ شتروگھن سنہا مسلسل بی جے پی اور پی ایم مودی پر حملہ کرتے ہیں۔ مہاگٹھ بندھن کے منچ پر بھی سنہا نظر آتے رہے ہیں۔ پارٹی کے خلاف ان کے رخ کو دیکھتے ہوئے پٹنہ صاحب سے ان کا ٹکٹ کاٹ دیا گیا۔ ان کی جگہ بی جے پی نے روی شنکر پرساد کو ٹکٹ دیا ہے۔آج پٹنہ ایئرپورٹ پر بی جے پی کے حامی آپس میں ہی بھیڑ گئے تھے۔دراصل روی شنکر پرساد اور آر کے سنہا کے حامی آپس میں بھڑے تھے جس کا ویڈیو بھی سوشل میڈیامیں جم کر وائرل ہوا تھا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *