یوپی میونسپلٹی پربی جے پی نے قبضہ جمایا

Share Article
cm-yogi
اترپردیش کے بلدیاتی انتخابات میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے اول مقام حاصل کرتے ہوئے 16 کارپوریشنز کے میئرکے عہدوں میں سے 14 جیت لیے۔ اس انتخاب میں غیر متوقع طور پر کارگردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) نے میئر کی دو سیٹیں حاصل کی۔ بی ایس پی نے میرٹھ اور علی گڑھ میئر کی سیٹ پر اپنا پرچم بلند کیا۔ ریاست کی اہم حزب اختلاف پارٹی (ایس پی) کو ایک بھی میئر کی سیٹ نہیں ملی تاہم، ایس پی کی میونسپل کونسلوں ، میونسپل اور نگر پنچایتوں میں کارکردگی تسلی بخش رہی۔ اس انتخاب کے ذریعے عام آدمی پارٹی (آپ) اور اسد الدین اویسی کی آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین اتر پردیش کی انتخابی سیاست میں داخل ہوئی۔
میونسپل کارپوریشنوں پربھارتیہ جنتاپارٹی(بی جے پی ) نے پرچم لہرایاہے۔اس کے علاوہ کئی میونسپلٹیز میں بھی بی جے پی بہترکارکردگی کا مظاہرہ کررہی ہے۔جیت کے بعدیوپی کے وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے کہاکہ یوپی کے بلدیاتی انتخابات سب کی آنکھوں کوکھولنے والے ہیں،جولوگ گجرات کے مقابلے میں بات کررہے تھے ان کاکھاتہ بھی نہیں کھلاہے اورامیٹھی میں بھی صفایاہوگیاہے۔انہو ں نے کہاکہ میونسپلٹی انتخابات میں پی ایم مودی کے وکاس مشن اورامیت شاہ کی حکمت عملی کی جیت ہوئی ہے۔انہو ں نے مزیدکہاکہ انتخابات نتائج ہمیں اوربھی ذمہ داری دی ہے۔
عیاں رہے کہ کچھ سیٹوں پربہوجن سماجوادی پارٹی سخت ٹکردے رہی ہے۔علی گڑھ میں بی ایس پی نے جیت درج کی ہے، یہاں 22سال سے بی جے پی تھی۔کانگریس نائب صدرراہل گاندھی کے پارلیمانی علاقہ امیٹھی میں بی جے پی نے بازی ماری ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *