بلقیس بانو معاملہ: گجرات حکومت کوراحت نہیں، 50لاکھ روپے معاوضہ دینے کا حکم

Share Article

 

سرکاری نوکری اور اس کے رہنے کے لئے مکان بھی فراہم کرائے
گجرات حکومت کی ریویو پٹیشن مسترد

سپریم کورٹ نے گجرات حکومت کو ہدایت دی ہے کہ وہ بلقیس بانو کو دو ہفتے کے اندر بطور معاوضہ 50 لاکھ روپے دے۔ کورٹ نے گجرات حکومت کے ریویو پٹیشن کو مسترد کرتے ہوئے یہ حکم دیا۔ کورٹ نے گجرات حکومت کو یہ بھی ہدایت کی کہ وہ بلقیس بانو کو سرکاری کام دے اور اسے رہنے کے لئے مکان بھی دستیاب کرائے۔

۔23 اپریل کو عدالت نے گجرات حکومت کو ہدایت دی ہے کہ وہ بلقیس بانو کو دو ہفتے کے اندر بطور معاوضہ 50 لاکھ روپے دے۔ اس فیصلے کے خلاف گجرات حکومت نے ریویو پٹیشن دائر کی تھی، جسے آج سپریم کورٹ نے مسترد کر دیا۔
سماعت کے دوران گجرات حکومت نے سپریم کورٹ کو بتایا تھا کہ ان پولیس افسران پر کارروائی کی گئی ہے، جنہیں ہائی کورٹ نے مجرم قرار دیا ہے۔ کچھ افسران ریٹائر ہو چکے ہیں ۔ان کی پنشن بند کر دی گئی ہے۔ جو اب بھی سروس میں ہیں، انہیں دو رینک ڈیموٹ کر دیا گیا ہے۔

گزشتہ 29 مارچ کو سپریم کورٹ نے گجرات حکومت کو ہدایت دی تھی کہ وہ ان چھ پولیس افسران کے خلاف تادیبی کارروائی کرے، جنہیں ہائی کورٹ نے مجرم قرار دیا تھا۔

دراصل، ان افسران نے بامبے ہائی کورٹ کے ذریعہ مجرم قرار دیے جانے کے بعد سپریم کورٹ میں درخواست دائر کی تھی۔ سپریم کورٹ نے 10 جولائی، 2017 کو ان افسران کی عرضی مسترد کر دی تھی۔ کورٹ نے گجرات کے پولیس اہلکار رام سنگھ بھگورا اور چار دوسرے پولیس افسران اور دو ڈاکٹروں کی درخواست مسترد کر دی تھی۔ کورٹ نے کہا تھا کہ تمام کی سزا برقرار رہے گی۔ دونوں ڈاکٹروں کو سپریم کورٹ نے کہا تھا کہ آپ نے ڈاکٹر ہونے کے باوجود پولیس کے کہنے پر رپورٹ لکھی، یہ آپ نے اپنے پیشے کے ساتھ صحیح نہیں کیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *