برطانوی انویسٹی گیٹیو صحافی کیرول کیڈ ولاڈر کہا کہ بڑی ٹیکنالوجی کمپنیاں جھوٹ پھیلانے کا آلہ بن گئی ہیں، یہ کمپنیاں انتخابی عمل پراثر انداز ہورہی ہیں۔دنیا میں نت نئے خیالات عام کرنے والے پلیٹ فارم ٹیڈ ٹاک میں گفتگو کرتے ہوئے کیرول نے کہا کہ بریگزٹ ریفرنڈم کے دوران بھی بھرپور آن لائن مہم چلائی گئی ہمیں نہیں معلوم کس نے کون سا اشتہار دیکھا، اشتہار ڈالنے والا کون تھا اور رقم کہاں سے آئی۔کیمبرج اینالیٹیکا اسکینڈل بے نقاب کرنے والی صحافی کیرول نے فیس بک کے بانی کو چیلنج دیا ہے کہ وہ انتخابی اشتہارات کے بارے میں سوالوں کاجواب دیں۔
 
Image result for Carol Cad ulcer in British journalist
 
کیرول نے فیس بک اور ٹوئٹر کے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا کہ وہ ٹیڈ کانفرنس میں آکر بتائیں کہ وہ الیکشن پر کس طرح اثرانداز ہورہے ہیں انہوں نے یہ بھی بتایا کہ ٹوئٹر کے سربراہ جیک ڈورسی آئندہ ہفتے ٹیڈ ٹاک میں اپنا موقف پیش کریں گے۔ٹیڈ ٹاک میں گفتگو کے دوران کیرول نے انکشاف کیا کہ برطانیہ میں پارلیمانی کمیٹی بریگزٹ ریفرنڈم میں فیس بک کے کردار کی چھان بین کررہی ہے تاہم فیس بک کے بانی مارک زکر برگ نے کمیٹی میں پیش ہونے سے انکار کردیا تھا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here