مچھلی کے ذائقے کیلئے ترس رہے ہیں پٹنہ والے

Share Article
fish
پٹنہ کے بازار میں آندھرا پردیش اور بنگال سے آنے والی مچھلیوں کے ساتھ سرکار نے مقامی مچھلیوں کی خریدو فروخت پر اگلے 15دنوں تک کیلئے روک لگا دی ہے۔روک فی الحال پٹنہ نگر نگم علاقہ میں رہے گی۔روک گزشتہ روز سے شروع ہو گئی ہے۔اس حکم کی ذمہ داری پٹنہ کے ضلع افسر کو دی گئی ہے۔اس کے ساتھ ہی سرکار نے پورنیہ،مظفر پور ،دربھنگہ اور بھاگلپور سے مچھلیوں کا سیمپل لیکر اس کی جانچ کرانے کو کہا ہے۔جانچ رپورٹ آنے کے بعد پورے بہار میں مچھلیوں پر روک لگانے کافیصلہ لیا جائے گا۔یہ جانکاری ہیلتھ ڈپارٹمنٹ کے جنرل سیکریٹری سنجے کمار نے دی ہے۔
سیکریٹری نے بتایا کہ آندھرا پردیش اور بنگال سے آنے والی مچھلیوں میں فرملن،مکری،کیڈمیم ،لیڈ جیسے انسا ن کے جسم کو نقصان پہنچانے والے کیمیکل کا استعمال ہو رہا ہے۔اس بات کی جانکاری ملتے ہی سرکار نے پٹنہ نگر نگم علاقہ سے دس نمونیلئے۔ان میں6نمونے آندھرا پردیش ،2بنگال اور2مقامی مچھلیوں کے تھے۔سرکار کے اس فیصلہ سے مچھلی کاروباریوں میں بہت ناراضگی ہے۔ان کا کہنا ہے کہ باہر کی مچھلیوں پر روک لگانا تو سمجھ میں آتا ہے لیکن مقامی مچھلیوں پر روک لگانا سمجھ سے باہر ہے۔ان کا کہنا ہے کہ سرکار کے اس فیصلہ سے ہم بے روزگار ہو رہے ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *