امریکہ میں سکھوں اور مسلمانوں پر حملہ ، کیا یہ دہشت گردی نہیں ہے ؟

ایم ودود ساجد

دنیا بھرمیں القاعدہ کی خبر لینے والے امریکہ کو خود اپنے القاعدہ کی خبر نہیں ہے۔ شمالی امریکہ کی ریاست وسکانسن کے چھ لاکھ کی آبادی پر مشتمل شہر ملواکی میں ایک گرودوارہ پر حیوانی حملہ کو آخر دہشت گردانہ حملہ کیوں نہیں کہا گیا؟ اورکیوںاس طرح کے حملوں کو ذہنی خلجان میں مبتلا افراد کا انفرادی فعل قرار دے کر اس باب کو بند کردیا جاتا ہے؟بلاشبہ ایشیائی النسل امریکیوںپر اس طرح کے حملے 9/11 کے واقعہ کے بعد تسلسل کے ساتھ ہورہے ہیںلیکن ان حملوںکی زد میں سب سے زیادہ امریکی

Read more

قصوروار مسلم تنظیمیں نہیں؟

ایم ودود ساجد
ہندوستانی مسلمانوںکی نوجوان نسل کے لئے آنے والا ہندوستان کیسا ہوگا؟ کیا مسلمانوں کے مذہبی اور سیاسی قائدین کواس کا اندازہ ہے؟بلاشبہ ان کو اس کا اندازہ ضرور ہوگا لیکن وہ اپنے سیاسی مفادات کی خاطر اس نکتہ سے مجرمانہ غفلت برت رہے ہیں۔گزشتہ دوماہ سے کم سے کم دوایسی خبریںگشت کررہی ہیں کہ جن کی بنیا دپرہمارے مسلم قائدین کی نیند حرام ہوجانی چاہئے تھی،لیکن تمام ثبوت وشواہد اس کی غمازی کرتے ہیں کہ مسلم قائدین کوان خبروں نے ہرگز پریشان نہیں کیا۔ انہیںان سیکڑوں بے گناہ مسلم نوجوانوںکی چیخیں سنا

Read more

تیونیشیا کے بعد ۔۔۔۔۔۔۔

ایم ودود ساجد
جس ملک کی ہزاروں مسجدیں نماز سے محض دس منٹ پہلے کھلیں اور نماز کے دس منٹ بعد بند کردی جائیں تو کیا آپ اس ملک کو عرب ملک قرار دے سکتے ہیں؟میرا خیال ہے کہ ایسے ملک کو عرب تو کیا ایک عام سا مسلم ملک بھی قرار نہیں دیا جاسکتا۔عوامی بغاوت کی آگ میں جھلسنے والے شمالی افریقی عرب ملک تیونیشیا میں پچھلے 30سال سے یہی سب کچھ ہوتا آرہا تھا۔تیونس میں آنے والا عوامی انقلاب اچانک نہیں آگیا ہے۔کم سے کم یہ میرے جیسے لکھنے والوں کے لئے متوقع انقلاب ہے اور اس کی آگ سے جلد یا بدیر دوسرے عرب ممالک بھی جھلسنے والے ہیں۔میں نے جون 2005میںملک بھرکے اخبارات میں شائع ہونیو الے ایک مضمون میں لکھا تھا کہ آج کل عرب ممالک میں اصلاحات کی آندھی چلی ہوئی ہے اور اس پوری صورت حال کالازمی تقاضہ یہ ہے کہ عرب شہنشاہیت اپنے انجام کو پہنچ جائے۔اس کے بعد مارچ2006میں شائع ہونیو الے ایک دوسرے مضمون میں ‘ میں نے رائے ظاہر

Read more

مصالحت یا تجارت؟

ایم ودود ساجد
آخر کار الہٰ آبادہائی کورٹ کی لکھنئو بنچ کے متنازعہ فیصلہ کے د و ہفتوں بعد مسلمانوں کے تمام مکاتب فکر کی نمائندہ تنظیم آل انڈیا مسلم پرسنل لابورڈنے سپریم کورٹ جانے کے فیصلہ کا متفقہ اعلان کردیا۔یہ بہت اچھا ہوا کہ بورڈ نے اختلاف رائے کے باوجود اتفاق رائے سے فیصلہ کا اعلان کیا۔اس میٹنگ میں دو مختلف مسالک کے کم از کم دو ایسے علما بھی شامل تھے جنہوں نے فیصلہ آنے کے بعد بورڈ کے موقف سے مختلف اپنی انفرادی رائے کا اعلان کردیا تھا جس میں سے ایک کی رائے کو میڈیا نے بھر پور جگہ دی۔یہی وہ چاہتے بھی تھے۔ورنہ قوم

Read more

کہاں ہیں مسلم قائدین

ایم ودود ساجد
اگر کسی مسلمان سے کوئی سروے کرنے والا یہ سوال کرے کہ ’کیا آپ کے خیال میں ہندوستان میں بغیر ثبوت کے مسلمانوں کو دہشت گردی کا ذمہ دار گردانا جاتا ہے؟تو آپ اسے مسلمانوںکا خیر خواہ سمجھیں گے یا بدخواہ؟وہ بد خواہ نہیں ہوگاتو کم سے کم بدنیت توہوگاہی اور اگر وہ اس سے بھی آگے بڑھ کر یہ سوال کرے کہ مذہب(لازمی طور پر مذہب اسلام)کمزور ہورہا ہے یا پ

Read more

جامعہ کا سوال اور کانگریس

جامعہ ملیہ اسلامیہ کے اقلیتی کردار کے سوال پر اب کوئی ابہام باقی نہیں رہ گیا ہے۔مرکزی وزیر برائے فروغ انسانی وسائل نے اس سوال پر انتہائی خطرناک اور مایوس کن بیان دے کر کانگریس پارٹی کو بھی برہنہ کردیا ہے۔اب تک اس مہم کے حامیوں اور جامعہ کے خیر خواہوں کو یہ بھرم تھا کہ حکومت خواہ اس مسئلہ پر دیانت دار نہ ہو لیکن کانگریس تو بہرحال جامعہ کے اقلیتی

Read more