ہم اپنے ہی ادارے کو پاکر کتنے خوش ہیں؟

نوازش مہدی
جامعہ ملیہ اسلامیہ کا قیام بابائے قوم مہاتما گاندھی کے صلاح و مشورے سے مسلمانوں کی تعلیمی پسماندگی کو دور کرنے کی غرض سے عمل میں آیا تھا۔ یہ بات ہم اور آپ تو بخوبی جانتے ہی ہیںساتھ ہی حکومت، یو جی سی اور ایچ آر ڈی منسٹری بھی جانتی ہے۔جامعہ کا قیام علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی طرز پر مسلمانوں نے کیا اور اس لیے کیا تاکہ مسلمان تعلیمی میدان میں کسی سے پیچھے نہ رہیں۔جیسے اسٹیفن کالج عیسائیوں کا اور خالصہ کالج سکھوں کا تعلیمی ادارہ ہے ویسے ہی جامعہ مسلمانوں کا تعلیمی ادارہ ہے۔اس ادارے پر سب سے پہلا حق مسلمانوں کا ہے۔جامعہ نے مسلمانوں کی کردار سازی اور تعلیمی پسماندگی کو دور کرنے میں خاصااہم رول ادا کیا ہے۔ یہ وہ ادارہ ہے جس نے ملک و بیرون ملک نہ صرف

Read more

ڈیفنڈر آف ڈیموکریسی

نوازش مہدی
چوتھیدنیا نے ایک انوکھی شروعات کرتے ہوئے سال میں ایک بار اس شخصیت کو اعزاز دینے کا فیصلہ کیا ہے جس نے جمہوریت کی حفاظت کرنے میں سب سے زیادہ اہم کردار ادا کیا ہے۔پہلا اعزاز ملک کے چیف الیکشن کمشنر ایس وائی قریشی کو دے کر چوتھی دنیا نے صحافت کی تاریخ میںایک نئی روایت شروع کی ہے۔
ایس وائی قریشی نے جس طرح بہار کے انتخابات کرائے وہ اس بات کا ثبوت ہے کہ اگر اعلیٰ عہدے پر بیٹھا ہوا آدمی ایماندا ر اور جمہوریت کے تئیں وفادار ہو تو سب لو

Read more