پی ایم او نے صفائی مانگی

دلیپ چیرین
وزیراعظم کے دفتر نے پنجاب اور سندھ بینک کے نئے چیئرمین کی تقرری پر وزیر خزانہ کی پسند پر سوال اٹھائے ہیں۔ا س بینک کا سربراہ روایتی طور پر ایک سکھ کو بنایا جاتا رہا ہے۔ جب جی ایس بیدی کا نام اس بینک کے چیئرمین کے لیے منتخب کیا گیا تب پی ایم او نے کہا کہ بینک کے چیف کا انتخاب کرتے وقت امیدوار کی صلاحیت پر توجہ دی جانی چاہیے، نہ کہ کسی دوسری باتوں پر۔ اس وجہ سے عہدہ کی دوڑ میں سب سے آگے چل رہے ڈی ایس بینس کو پی ایم او کی حمایت نہیں ملی۔ بینس ابھی پنچاب کے فائنانس کمشنر ہیں۔ وزارت خزانہ نے ان کا نام اس عہدہ کے لیے پیش کیا تھا، لیکن پی ایم او سے نام پر مہر نہ لگنے کی صورت میں تقرری کا معاملہ لٹک گیا ہے۔ ساتھ ہی پی ایم او نے وزارت خزانہ سے اس مسئلے پر صفائی

Read more

پی سی ایس افسران کے لئے خوش خبری

دلیپ چیرین
زیادہ تر اسٹیٹ پبلک سروسز افسران کے لیے انڈین ایڈمنسٹریٹیو سروسز میں شامل ہونا کسی خواب سے کم نہیں ہوتا۔ مثال کے طورپر کرناٹک میں اسٹیٹ سول سروسز کے افسران کو ریاست کے اندر ہی آئی اے ایس کیڈر میں شامل کرنے کے لیے صرف 5 ہی اسامیاں ہوتی ہیں۔ یعنی ہر سال اسٹیٹ سول سروسز کے 5 بابوؤں کو آئی اے ایس کیڈر میں جگہ ملتی رہی ہے۔ حالانکہ اس سال اسٹیٹ سروسز کے ان افسران کے پاس خوش ہونے کی ایک زبردست وجہ ہے۔ یدیورپا حکومت کو آئی اے ایس کیڈر کے 26 خالی عہدے پر کرنے ہی

Read more

بدعنوان بابو اور حکومت کے بے توجہی

دلیپ چیرین
مرکزی ویجلنس کمیشن کی 2009کی سالانہ رپورٹ سے یہ انکشاف ہوا ہے کہ کس طرح سے بہت سارے بدعنوان بابو اپنے اوپر لگائے گئے اقتصادی جرمانے کی ادائیگی کرنے سے بچ گئے اور اس کی وجہ حکومت کی غیرفعالی رہی۔ رپورٹ کے مطابق 2009میں پینل نے بدعنوانی کی 5783شکایتوں کی جانچ کی، لیکن صرف 42فیصد داغی بابوؤں پرہی جرمانہ لگایا جاسکا۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ ان مجرموں میں وہ بابو بھی ہیں جو پی چدمبرم، ممتابنرجی اور پرنب مکھرجی کی وزارت سے جڑے ہیں۔ ذرائع کے مطابق وزارت خزانہ اور وزارت

Read more

پرسار بھارتی سے لالی کی چھٹی

دلیپ چیرین
پرسار بھارتی کے متنازعہ چیف ایگزیکٹیو آفیسر بی ایس لالی اس بار نہیں بچ سکے۔صدر جمہوریہ پرتبھا پاٹل کی جانب سے سپریم کورٹ کے ذریعہ لالی کے خلاف کئی انتظامی اور مالی بدعنوانیوں کی جانچ کی منظوری دینے کے دو ہفتوں کے بعد آخر کار حکومت نے کارروائی کرنے کا فیصلہ کیا اور انہیں برخاست کر دیا گیا۔مرکزی ویجلینس کمیشن کے ذریعہ 1971بیچ کے آئی اے ایس افسر لالی پر شدید الزامات لگائے جانے کے بعد پرسار بھارتی کے اندر افسران کے اندر گروہ بندی اپنے عروج پر پہنچ چکی تھی۔حالانکہ کئی افسران اس سے پہ

Read more

نوکر شاہوں کی شامت

دلیپ چیرین
بدعوانی کی زد میں آئے نوکرشاہوں کی بدقسمتی ان کا پیچھا نہیں چھوڑ رہی ہے۔زمین الاٹمنٹ گھوٹالے میں اتر پردیش کی سابق چیف سکریٹری نیرا یادو جیل گئیں،لیکن اب وہ ضمانت پر باہر ہیں۔وہیں دوسری طرف2جی گھوٹالے مسئلے پر اے راجہ سے رابطے کی وجہ سے محکمۂ مواصلات کے کئی اعلیٰ افسران پر سی بی آئی کا ڈنڈا ابھی چل ہی رہا ہے۔ان میں سابق سکریٹری برائے مواصلات سدھارتھ بہوریا،کے شری دھر،اے کے شریواستواور آر کے چند

Read more

تھامس کے حمایتی

دلیپ چیرین
پریشانی سے جوجھ رہے سی وی سی ،پی جے تھامس کو اگلے مہینے تک کے لیے فوری راحت تو مل گئی،لیکن اپنے ماضی کے داغدار سائے کے الزام سے وہ آزاد نہیں ہو پا رہے ہیں۔وہ خود کو الگ تھلگ محسوس کر رہے ہیں۔باوجود اس کے اپنی آبائی ریاست کیرل کے کچھ بابؤں کی حمایت تو انہیں مل ہی رہی ہے۔کیرل آئی اے ایس آفیسرس ایسوسی ایشن تھامس کی حمایت میں اتر آئی ہے۔ایسو سی ایشن کا یہ ماننا ہے کہ ان کے سابق ریاستی چیف سکریٹری ایک گندی مہم کے شکار بن گئے ہیں۔لیکن دہلی میں بیٹھے ایسے لوگ،جو نوکر

Read more

نتیش کی اسکیم

دلیپ چیرین
نتیش کمار کی پہلی مدت کے دوران بہار کے سرکاری دفتروں میں بڑی تبدیلی کو لوگوں نے محسوس کیا۔نتیش کمار نے اسپیشل کورٹ بل لا کر بدعنوان نوکر شاہوں کی جائیداد قرق کرنے کا انتظام کیا۔ذرائع کے مطابق دو آئی اے ایس افسران سمیت 14نوکرشاہوں کو اس ایکٹ کے تحت سزا دی گئی۔ایس ایس ورما اور کے پی سنگھ کو اس قانون کے تحت سزا ملی۔اس مرتبہ بھاری اکثریت ملنے کے بعد نتیش انتظامی اصلاحات کے اگلے مرحلے کے لیے پر جوش ہیں۔وزیر اعلی رائٹ ٹو سروس ایکٹ کے ذریعہ بدعنوان نوکرشاہوں کو سبق سکھانا

Read more

بدعنوان افسران سے نمٹنے کا عہد

دلیپ چیرین
کارپوریٹ گھرانوں کو غیرقانونی طریقے سے اطلاعات دینے کے الزام میں وزارت داخلہ کے سینئر افسر روی اندر کی پہلے گرفتاری اور پھر معطلی نے وزارت کے اعلیٰ افسران کی پیشانی پر شکنیں ڈال دی ہیں۔ داخلی سلامتی ویسے بھی وزارت داخلہ کی پالیسیوں کے دائرے میں آتی ہے۔ روی اندر سنگھ کی گرفتاری کے بعد سیکس اور پیسے کے تئیں ان کے لالچ کو سرخیاں ملیں، لیکن وزارت اس لیے زیادہ متفکر ہے کیوں کہ سنگھ تیسرے ایسے افسر ہیں، جنہیں ایک سال کے اندر اس طرح کی کارگزاریوں کے لیے گرفتار کیا گیا ہے یا چھاپے مارے گئے ہیں۔ سال کی شروعات میں اپریل ماہ کے دوران او روی، جوائنٹ سکریٹری، ڈیزاسٹر مینجمنٹ کو رشوت خوری کے الزام میں سی بی آئی نے گرفتار کیا تھا۔ اس کے بعد آر ایس شرما بھی ایسے

Read more

نوکرشاہوں کی شامت

دلیپ چیرین
کبھی گھوٹالوں کی بات ہوتی ہے تو اکثر یہ سوال پوچھا جاتا ہے کہ کیا اس میں شامل نوکرشاہوں کو بھی باہر کا راستہ نہیں دکھایا جانا چاہیے؟ ایسی مثالیں بار بار دیکھنے کو ملی ہیں جب نوکر شاہ تو بچ نکلتے ہیں، لیکن ان کے سیاسی آقاؤں کی بلی چڑھ جاتی ہے۔ ممبئی حملے کے بعد بھی سیاست دانوں کو ہی اپنا عہدہ چھوڑنا پڑا تھا جب کہ خاطی افسران اپنا کام پہلے کی طرح کرتے رہے، لیکن الزامات اور گھوٹالوں کے اس موسم میں حالات بدلنے کے اشارے مل رہے ہیں۔ جب پورے ملک میں اسپیکٹرم گھوٹالہ، ہاؤسنگ لون گھوٹالہ، دولت مشتر

Read more