سیاست میں اختلافات بہت ضروری

کمل مرارکا
گزشتہ سال ملک بد عنوانی اور باہری ملک میں رکھے کالے دھن کی چرچا میں مشغول رہا۔کچھ وزیر جیل گئے اور انا ہزارے نے بد عنوانی کے خلاف تحریک شروع کی۔حالانکہ بد عنوانی ایک اہم مدعا ہے، لیکن اس سے بھی زیادہ اہم ہے ملک میں روزگار کے مواقع کا نہ ہونا۔1991 کے مالی اصلاحات سے پہلے ہماری ترجیحات میں غریبوں کو سستے داموں میں اناج فراہم ک

Read more

یو پی بنا سیکڑوں سیاسی پارٹیوں کا میدان جنگ

سلمان عبدالصمد
ریاست اترپردیش میں 2012 میں ہونے والے اسمبلی انتخابات کے لیے تقریباً200 پارٹیاں طبع آزمائی کرنے جارہی ہیں۔ ریاستی چیف الیکشن کمشنر امیش سنہا کے مطابق موجودہ انتخابات میں 178 رجسٹر ڈ جماعتیںقسمت آزمائی کے لیے تیار ہیں۔ 1969 کے اسمبلی انتخابات میں کل 17 رجسٹرڈ جماعتیں تھیں۔ 1974 میں 16، 1977 اور 1980 میں سات سات، 1985 میں صرف 2،

Read more

یو پی اسمبلی انتخابات مسلمانوں کے لئے فیصلہ کن گھڑی

محمد فرقان عالم
یو پی آبادی کے اعتبار سے ہندوستان کا سب سے بڑا صوبہ ہے۔ اس صوبے کو جہاں علمی وادبی افق پر ایک اہم مقام حاصل ہے ، وہیں سیاسی میدان میں بھی اس کی حیثیت مسلم ہے۔ یہی وجہ ہے کہ تمام سیاسی پارٹیاں یہاں کی کامیابی کو ہی اپنی ترقی کا ضامن سمجھتی ہیں،جو بہت حد تک صحیح بھی ہے۔ اس لیے تمام پارٹیوں کا خیال یہ ہے کہ اگر اترپردیش میں ان کی پوزیشن مضبوط رہی تو مرکز میں بھی انہیں کا دبدبہ ہوگا یعنی پارٹیاں 2014کے پارلیمانی انتخاب پر بھی نگاہیں جمائے ہوئی ہیں ۔ نتیجتاًوہ اترپردیش کی کامیابی کو 2014کا مقدمہ سمجھ رہی ہیں۔ مذکورہ مقاصد کے پیش نظر تمام چھوٹی بڑی پارٹیاں میدان میں پوری طرح سرگرم ہو

Read more

یہ ہندوستان کے لئے امتحان کی گھڑی ہے

کمل مرارکا
جتنا ہم محسوس کرتے ہیں ، اس سے زیادہ مشکل دور سے ہمارا ملک گزر رہا ہے۔ 1991 میں ہوئی اقتصادی اصلاحات نے بہت سارے امکانات پیدا کیے، جنہوں نے اس بات کی امید بڑھائی کہ ملک کی اقتصادی شرح ترقی میں اضافہ ہوگا۔ گزشتہ بیس سالوں میں بہت سارے واقعات رونما ہوئے۔ اقتصادی شرح ترقی میں لگاتار اضافہ ہوا، جسے مختلف شعبوں میں ہونے والی ترقی میں دیکھا جاسکتا ہے۔ بڑے اور چھوٹے شہروں میں سڑکوں، فلائی اووروں اور مالس وغیرہ کی تعمیر بڑے پیمانے پر ہوئی۔ متوسط طبقہ نے اچھی ترق

Read more

نئی پارلیمنٹ لوک پال بل پاس کرے

ایک بار پھر لوک پال بل کے تعلق سے کئی سوال اٹھ رہے ہیں۔ ایسا لگتا ہے، جیسے یہ ایک پہیلی بن گیا ہو۔ سرکار کو رٹیل مارکیٹ میں ایف ڈی آئی پر پیچھے ہٹنا پڑا اور اب لگتا ہے کہ اسے پنشن اور کمپنی بل کے معاملوں میں بھی ایسا ہی کرنا پڑے گا۔ ایسا لگتا ہے کہ سرکار خود اپنے ہی فیصلے میں الجھ گئی ہو، قید ہوگئی ہو۔ یہ اس ملک کے لیے اچھا نہیں ہے۔ اسے ایک نیک فال نہیں مانا جاسکتا ہے۔ ہر وقت یہ ضروری ہے کہ ملک میں ایک با اثر سر

Read more

ہندوستان کی تقسیم اور اردو

جسٹس مارکنڈے کاٹجو (چیئر مین ، پریس کونسل آف انڈیا)
انیس سو سیتلایس میں تقسیمِ ہند سے اردو کو سب سے بڑا نقصان پہنچا۔ اس وقت سے اردو کو غیر ملکی زبان کہا جانے لگا اور یہ کہ اردو صرف مسلمانوں کی زبان ہے، یہاں تک کہ اپنی حب الوطنی ثابت کرنے کے لیے اور اپنے ہندو بھائیوں کے ساتھ ہم آہنگی ثابت کرنے کے لیے خود مسلمانوں نے اردو پڑھنا چھوڑ دیا۔1947 کے بعد فارسی کے وہ الفاظ جو عام استعمال میں تھے، انہیں ہٹاکر ان کی جگہ سنسکرت کے الفاظ ڈال دی

Read more

میری دلّی پرانی دلّی

ایس وائی قریشی (چیف الیکشن کمشنر، ہند)
دنیا کے تمام بڑے شہروں کی سب سے بڑی خوبی یہ ہے کہ وہ اپنے اندر طاقت اور سرمایے کا خزانہ تو رکھتے ہی ہیں، ساتھ ہی وہ معاشرتی زندگی کی خوبصورتی اور کثرت کو بھی اپنے اندر سموئے ہوئے ہیں۔ قدیم روم متعدد قیصر کا شہر ہی نہیں تھا، بلکہ یہ شہر گلیڈییٹرس، موسیقاروں، محل سراؤں، اور اس قسم کے

Read more

یہ محدود جمہوریت ہے

راجیو کمار
مصر میں پارلیمانی انتخابات شروع ہو چکے ہیں۔ تین مرحلوں میں ہونے والے یہ انتخابات جنوری تک چلیں گے۔ پہلے مرحلہ کا انتخاب پورا ہو چکا ہے اور اس کے نتیجے بھی آ چکے ہیں۔ جو نتائج سامنے آئے ہیں، ان پر کئی سوال اٹھائے جا سکتے ہیں۔ حالانکہ یہ کوئی حیران کن نتائج نہیں ہیں۔ پہلے سے ہی اندازہ لگایا جا رہا تھا کہ مسلم بردرہوڈ سے وابستہ پارٹیوں کو انتخاب میں زیادہ فائدہ مل سکتا ہے، لیکن پھر بھی اس بات کی امید ضرور تھی کہ جمہوریت کے لیے

Read more