دہشت گردی کے ساتھ ساتھ منشیات کی بھی انڈسٹری بن رہا ہے پاکستان

یہ بات بہت مشہور ہے کہ پاکستان دہشت گردوں کے لئے زرخیز زمین ہے۔ وہاں دہشت گردوں کو پنپنے، پروان چڑھنے اور اپنی سرگرمیوں کو آگے بڑھانے کا موقع دیا جاتا ہے۔اگرچہ پاکستان اس کو ماننے سے انکار کرتا ہے۔ میں اس وقت صرف یہ بتانا چاہتا ہوں کہ دہشت گردی کے علاوہ پاکستان میں ایک او ر ایسے عمل کو انجام دیا جاتا ہے جو انسانوں کے لئے دہشت گردی کی طرح ہی تباہ کن ہے۔ وہ ہے منشیات کا استعمال ۔ پاکستان میں تقریباً 70 لاکھ لوگ منشیات کے عادی ہیں جبکہ اس کے روزانہ استعمال کے نتیجے میں 700 افراد موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔یہ بات سینیٹر رحمان ملک کی سربراہی میں سینیٹ کی اسٹینڈنگ کمیٹی برائے داخلہ اور انسداد منشیات کے ایک اجلاس میں بتائی گئی ہے۔اس اجلاس میں انسداد منشیات فورس کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل خاور حنیف نے بھی منشیات کے بڑھتے ہوئے رجحان پر تشویش کا اظہار کیا

Read more

مودی کا سعودی عرب دورہ، پاکستان پر دبائو بڑھ سکتا ہے

عام لوگ ہندوستان اور سعودی عرب کے تعلقات کو تیل اور بڑی تعداد میں کام کے مواقع سے زیادہ اہمیت نہیں دیتے ہیں۔لیکن سچائی تو یہ ہے کہ اربوں کھربوں کے تیل کے کاروبار کے علاوہ مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری اور سیکورٹی میں باہمی تعاون کی وجہ سے دونوں ملکوں کے درمیان اسٹریٹجک تعلقات تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔اسی تعلق کا نتیجہ ہے کہ دونوں ملک کے اعلیٰ سطحی وفود کے علاوہ سربراہان کے دوروں میں بھی اضافہ ہوا ہے۔حالیہ ہفتہ میں ہندوستانی وزیر اعظم

Read more

سوئم سیوک سنگھ کی دکھ بھری کہانی کوئی تو سنے یہ داستان

9 سال کی عمر سے ایک شخص سنگھ کی شاکھا میںجاتا رہا۔ عمر کی ساتویںدہائی میںبھی وہ آدمی خود کو سنگھ کا سپاہی بتاتا ہے۔ کسی تنظیم کے تئیںاس لگن کو تو بس سراہا ہی جاسکتا ہے۔ ایمرجنسی کی مخالفت کرتے ہوئے یہی شخص جیل جاتا ہے اور جیل سے چھوٹنے کے بعد سے ہی اس کی زندگی بدل دی جاتی ہے۔ جیتے جی اس آدمی کے لیے یہ زندگی ایک ایسی تاریکی میں تبدیل ہوجاتی ہے، جس کی آج تک کوئی صبح ہوتی دکھائی نہیںدے رہی ہے۔ گزشتہ 37 سالوںکی اس المناک زندگی میں اس شخص نے اپنے بیٹے کو کھویا،اپنی بیٹی کو کھویا، اپنی ماںکو کھویا،اپنی نوکری کھوئی،اپنی بیوی کو بیمار ہوتا دیکھا۔ لیکن پھر بھی کوئی چیز اس آدمی نے نہیںکھوئی ہے تو وہ ہے حوصلہ، وہ ہے امید، وہ ہے انصاف پانے کے راستے پر چلنے کی طاقت۔ کیا آپ یقین کرسکتے ہیں کہ ایک عام سا آدمی انصاف پانے کے لیے پچھلے 38سالوں سے اس سسٹم سے لگاتار لڑسکتا ہے،وہ بھی اتنا سب کچھ کھونے کے بعد۔ کیا آپ سوچ سکتے ہیں کہ راشٹریہ سوئم سیوک سنگھ کے ایک سپاہی کی حالت اتنی قابل رحم ہوسکتی ہے ، وہ بھی تب جبکہ مرکز سمیت ریاست میںبھی بھارتیہ جنتا پارٹی کی سرکار ہے۔

Read more

کولکتا فلائی اوورکا سچ، لیڈروں نے آپس میں ہی بانٹ لئے تھے سارے ٹھیکے

کولکتا کے بڑا بازار علاقے کے ویویکانند روڈ پر بن رہے فلائی اوور کا ڈیڑھ سو میٹر کا حصہ گزشتہ 31 مارچ کو دن کے 12بج کر 32منٹ پر اچانک منہدم ہوگیا۔ بے حد خطرناک ڈھنگ سے گرنے والے فلائی اوور کے نیچے لوگوں سے بھری ایک بس ، تین ٹیکسیاں، تین پرائیویٹ کاریں، ایک ٹرک، دو موٹر سائیکلیں،دو ہاتھ سے کھینچے جانے والے رکشے اور ایک رکشہ وین دب کر پس گئے۔ اس حادثے میں جیسا کہ اعلان کیا گیا کہ 27لوگوں کی موت ہوئی ہے۔لیکن وہاں موجود لوگوں کا کہنا ہے کہ مرنے والوں کی تعداد اس سے زیادہ ہو سکتی ہے۔ اس کے علاوہ تقریباً 50لوگ بری طرح زخمی ہو گئے جو مختلف اسپتالوں میں بھرتی ہیں۔ اس پل کو’ آئی وی آر سی ایل لمیٹیڈ‘ نام کی حیدرآباد کی کمپنی بنا رہی ہے۔ اس کمپنی کے خلاف ایف آئی آر درج ہو چکی ہے۔ حادثہ کے اگلے ہی دن کولکتا ہائی کورٹ میں اس حادثہ کے خلاف ایک عوامی مفاد میں عرضی بھی داخل ہو گئی۔ عرضی کے داخل ہوتے ہی ریاستی سرکار نے اپنی ہی ایجنسی کولکتا میٹروپولٹین ڈیولپمنٹ اتھارٹی (کے ایم ڈی اے) کے خلاف جانچ کا حکم دے دیا۔ اس کے دو انجینئروں سے پوچھ تاچھ ہوئی ہے۔ اس فلائی اوور کی تعمیر کے لئے سب کانٹریکٹ ان کمپنیوں کو دیا گیا ہے جو چھوٹی ہیں اور انہیں فلائی اوور بنانے کا کوئی تجربہ نہیں ہے۔الزام ہے کہ سب کانٹریکٹ حاصل کرنے والی کمپنیاں برسراقتدار پارٹی کے لیڈروں یا ان کے رشتہ داروں کی ہیں۔

Read more

کشمیراین آئی ٹی تنازعہ ، میڈیا پر چنگاری کو ہوا دینے کی سازش

سرینگر کے نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی ( این آئی ٹی ) میں کشمیر ی اور غیر کشمیری طلباء کے درمیان پیدا شدہ پر تشدد تنازعہ طول پکڑتا جارہا ہے۔ صورتحال کا سب سے زیادہ منفی پہلو یہ ہے کہ اس تنازعے کو اب ’’مسلم طلبا بنام ہندو طلبا‘‘ کا رنگ دیا جارہا ہے اور اسے ’’بھارت ماتا کی جئے‘‘ کے متنازعہ نعرے کے ساتھ جوڑا جارہا ہے۔ اتنا ہی نہیں اس مسئلے کی وجہ سے ریاست میں قائم مخلوط سرکار کی دونوں اکائیوں پی ڈی پی اور بی جے پی کے درمیان ہلکے سے تنائو کے آثار بھی نظر آنے لگے ہیں ،کیونکہ سماجی رابطے کی ویب سائٹوں پر اور مقامی

Read more

محبوبہ مفتی دوہری آزمائش سے دوچار بھاجپا کے ساتھ قدم سے قدم ملا کر چلناایک دشوار گذار سفر ثابت ہوگا

محبوبہ مفتی اور انکی وزارتی کونسل کی حلف برداری کی تقریب میںتوقع کے برعکس بی جے پی کے کسی بھی لیڈر نے ’’بھارت ماتا کی جئے‘‘ کا متنازعہ نعرہ بلند نہیں کیا۔ حالانکہ عمر عبداللہ سے لیکرعام آدمی پارٹی کے کپل مشرا تک کئی لوگوں نے بھاجپا کواس کے لئے اُکسایا تھا۔

Read more

لیچی کاروبار میں عالمی بازار پر ہوتا ہندوستان کاقبضہ

ملک کا پہلا تین روزہ پھل مہوتسو ‘ لیچی پورم اتسو جوش و خروش کے ساتھ 7جون کو ختم ہوا۔ بہار کے مشرقی چمپارن ضلع کے مہسی ڈویژنل ہیڈ کوارٹر میں ترہوٹ اسٹیٹ ہائی اسکول میں 5 سے 7 جون جون کو منعقد اس تقریب میں ہزاروں لوگ آئے۔8برسوں سے منعقد ہونے والے مہوتسو اپنے مقصد میں کامیاب رہاہے،لیکن مرکز ی اور ریاستی سرکار کی بے حسی کی وجہ سے اب تک متوقع کامیابی نہیں مل پائی ہے۔ سرکار کا تعاون ملتا تو لیچی کے کاروبار میں ہندوستان کی عالمی منڈی میں اہم حصہ داری رہتی اور شہد پیداوار میں بھی ہندوستان سب سے آگے ہوتا ۔
2008 تک لیچی پیدا کرنے والے علاقے کی شکل میں مظفر پور کا شمار پورے ملک میں تھا۔مظفر پور ضلع کی شاہی لیچی ملک و بیرون ملک میں مشہور ہے۔ تب ریاستی سرکار کے لیچی

Read more

بہار میں دو یونیورسٹیوں کی منظوری،لیکن ایک پر تنازع

وزارت برائے ترقی انسانی وسائل ،ہندوستان کی حکومت کے ذریعہ سینٹرل یونیورسٹی (ترمیم)ایکٹ 2014 کے ذریعہ بہار میں دو مرکزی یونیورسٹی کے قیام کی منظوری ملی۔ اس دونوں میں سے گیا میں سینٹرل یونیورسٹی میں تعلیم کا کام شروع ہوگیاہے۔ وہیں دوسری طرف موتہاری کی مہاتما گاندھی یونیورسٹی میں اس سیشن سے تعلیمی سلسلہ شروع کرنےک کی کوشش تیز ہورہی ہے۔ وائس چانسلر ڈاکٹر اروند اگروال نے یونیورسٹی کی عمارت بننے تک متبادل عمارت کے بندوبست کرنے کو کہا ہے جہاں پڑھائی

Read more

اگر آپ کا فون کھو جائے، تو یہ طریقے اپنائیں

آج کی بھاگ دوڑ بھری زندگی میں اگر آپ کا فون کھوجائے، تو آپ کافی پریشان ہوجائیں گے، کیونکہ اس کے بعدنہ صرف نیا فون خریدنے کاجھنجھٹ آجاتا ہے، بلکہ فون کے ساتھ ساتھ آپ کی ڈھیر ساری اہم دستاویز، نجی تصویریں، فون نمبر، ایڈریس ویڈیو، فون ڈاٹا، جو اس میں اسٹور ہوتا ہے، یہ سب دوسرے شخص کے ہاتھ میں چلاجاتا ہے ، جس کی وجہ سے آپ سے متعلق انفارمیشن اور تصاویر کا غلط استعمال ہوسکتا ہے۔ اگر آپ تھوڑی سیہوشیاری برتیں، توآج کی ماڈرن ٹیکنالوجی کا استعمال کرکے آپ ایسی حالت میں اپنا ڈاٹا غلط ہاتھوں میں جانے اور اس کے غلط استعمال ہونے سے بچا سکتے ہیں۔
آپ کی مدد کے لیے کچھ معلومات

Read more

بہار کا ہرلاکھی ضمنی انتخاب:این ڈی اے کو راحت

بہار کی سیاست کو ہر لاکھی اسمبلی انتخابی حلقہ کے ضمنی انتخاب کے نتیجے کا بے چینی سے انتظار تھا۔ یہ سیٹ این ڈی اے کی اتحادی راشٹریہ لوک سمتا پارٹی (آر ایل ایس پی) کے کھاتے میں گئی۔ برسراقتدار مہا گٹھ بندھن کے کانگریس امیدوار محمد شبیر ساڑھے اٹھارہ ہزار سے زیادہ ووٹوں سے ہارے۔ اسمبلی انتخابات میں بھی یہ سیٹ ضمنی انتخابات میں جیتنے والے سدھانشو شیکھر کے والد وسنت کشواہا کے کھاتے میں ہی گئی تھی، لیکن حلف لینے سے پہلے ہی ان کا انتقال ہوگیا تھا۔ اس بار این ڈی اے کی جیت کا فاصلہ پچھلی جیت کے مقابلہ میں تقریباً پانچ گنا زیادہ رہا۔ اس انتخابی نتیجہ نے فوری طور پر کوئی ہلچل تو پیدا نہیں کی ہے، لیکن اس میں دورائے نہیں کہ اس جیت سے اپوزیشن این ڈی اے کا سیاسی حوصلہ کافی بڑھا ہے۔ این ڈی اے کی اتحادی جماعتوں نے تو فوری طوری پر ایسا کہا بھی ہے۔ اس ضمنی انتخاب کی تشہیر اور سیٹ نکالنے کے سیاسی نظم میں سنجیدگی سے لگے آر جے ڈی سپریمو لالو پرساد نے حالانکہ اب تک کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا ہے، لیکن کانگریس اور جنتا دل یونائٹیڈ نے اسے ہمدردی کی لہر اور بی جے پی کے ہتھکنڈے کے طور پر پیش کیا ہے۔ ان جماعتوں کے لیڈروں نے اسے سرے سے ہی خارج کیا ہے کہ یہ نتیجہ ریاست کی مہا گٹھ بندھن سرکار کے کام کاج اور ریاست کے عام حالات پرووٹروں کا کوئی فیصلہ ہے۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ آر ایل ایس پی کے امیدوار ہمدردی کی لہر پر تو سوار تھے ہی، انتخابی حلقہ میں پولرائزیشن بنانے میں بھی این ڈی اے (بی جے پی ) کامیاب رہا او راس سے پولنگ گہرائی کے ساتھ متاثر ہوئی۔

Read more