ممبئی حملہ کے مجرم ڈیوڈ ہیڈلی پرجیل میں جان لیوا حملہ،جانئے حملے پرہیڈلی کے وکیل نے کیاکہا

Share Article
david-headley
ممبئی میں 2008 ہوئے دہشت گردانہ حملہ کے مجرم پاکستان نژاد امریکی شہری ڈیوڈ کولمین ہیڈلی پر امریکی جیل کے اندر مبینہ طور پر قیدیوں نے حملہ کر دیا ہے۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق، ہیڈلی کی حالت بے حد سنگین بتائی جا رہی ہے۔ ہیڈلی فی الحال آئی سی یو میں بھرتی ہے۔ حالانکہ امریکی افسران نے اس پر کسی قسم کا کوئی تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا ہے۔
میڈیارپورٹس کے مطابق،دوسری طرف ڈیوڈ کولمین ہیڈلی کے وکیل نے شکاگو جیل میں اس کے اوپرہوئے حملے کی خبروں سے انکارکیاہے۔ برسوں سے ہیڈلی کا قانونی معاملہ دیکھ رہے وکیل جون تھےئس نے کہاکہ میرے لئے ایک خبرہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق،انہوں نے کہاکہ ’’میرے پاس حملے کولیکر کوئی جانکاری نہیں ہے۔ میں آپ کواس کی وجہ کے بارے میں نہیں بتاسکتا ہوں لیکن میں یہ کہہ سکتاہوں کہ میرے پاس حملے کولیکرکوئی جانکاری نہیں ہے‘‘۔
بتایا جا رہا ہے کہ ہیڈلی پر جیل میں بند دو قیدیوں نے حملہ کر دیا تھا۔ ہیڈلی پر حملہ کرنے والے دونوں لوگ سگے بھائی ہیں۔ یہ دونوں کئی سال پہلے پولیس اہلکاروں پر حملہ کئے جانے کی سزا کاٹ رہے ہیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اس حملہ میں ہیڈلی کو سنگین چوٹیں آئی ہیں جس کے بعد اسے نارتھ ایوسٹن اسپتال میں بھرتی کرایا گیا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *