آسیہ بی بی پاکستان چھوڑ کربیرون ملک چلی گئیں

Share Article

asiya-bibi

اسلام آباد:پاکستانی حکام کے مطابق توہین مذہب کے مقدمے میں پاکستان سپریم کورٹ سے باعزت بری ہونے والی مسیحی خاتون آسیہ نورین چھوڑ چکی ہیں اور بیرون ملک روانہ ہو گئی ہیں۔دفتر خارجہ کے ذرائع کے مطابق ’آسیہ بی بی ملک سے جاچکی ہیں، وہ آزاد ہیں اور اپنی مرضی سے وہ اس سفر پر گئیں‘۔تاہم ذرائع نے اس حوالے سے کوئی وضاحت نہیں کی ہے کہ آسیہ بی بی کس ملک گئی ہیں۔امریکی نشریاتی ادارے سی این این کی رپورٹ کے مطابق آسیہ بی بی کا مقدمہ لڑنے والے وکیل سیف الملوک نے تصدیق کی کہ وہ کینیڈا پہنچ گئی ہیں۔پاکستانی دفترِ خارجہ اور وزارتِ اطلاعات کے ذرائع نے آسیہ بی بی کی روانگی کی تصدیق کی تاہم یہ نہیں بتایا کہ ان کی منزل کیا ہے اور وہ کب ملک سے روانہ ہوئیں۔
توہین مذہب کے الزام میں سزائے موت کی حقدار ٹھہرائے جانے والی آسیہ بی بی کو آٹھ سال قید میں رکھا گیا تھا لیکن گزشتہ برس اکتوبر میں عدالتِ عظمیٰ نے ان الزامات کو غلط قرار دیتے ہوئے انھیں بری کر دیا تھا۔بعدازاں رواں برس کے آغاز میں ان کی بریت کے خلاف دائر اپیل بھی مسترد کر دی گئی تھی۔آسیہ بی بی کو رہائی کے بعد پاکستان میں ایک نامعلوم محفوظ مقام پر منتقل کر دیا گیا تھا کیونکہ ان کی رہائی کے فیصلے پر ملک میں مذہبی حلقوں کی جانب سے شدید ردعمل سامنے آیا تھا۔ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے 10 اپریل کو بی بی سی کو دیے گئے انٹرویو میں کہا تھا کہ آسیہ بی بی ‘بہت جلد پاکستان چھوڑ دیں گی۔’

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *