جی ایس ٹی اور نوٹ بندی سمیت ان فیصلوں کے لئے یاد کئے جائیں گے ارون جیٹلی

Share Article
Arun Jaitley will be remembered for his decisions, including GST and notation

 

سابق وزیر خزانہ ارون جیٹلی کا ہفتہ کی دوپہر 12 بج کر 07 منٹ پر دہلی میں واقع ایمس اسپتال میں انتقال ہو گیا۔ جیٹلی طویل وقت سے بیمار چل رہے تھے۔ راجدھانی دہلی کے آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز (ایمس) میں ان کا علاج چل رہا تھا۔ ارون جیٹلی 66 سال کے تھے۔ سابق وزیر خزانہ کی مدت کار میں انہوں نے کئی ایسے اقتصادی فیصلے لئے گئے، جن کے لئے ملک ان کوہمیشہ یاد رکھے گا۔

گڈس اور سروس ٹیکس (جی ایس ٹی):
سابق وزیر خزانہ ارون جیٹلی کے عہد میں ایک ملک ،ایک ٹیکس گڈس اینڈ سروس ٹیکس (جی ایس ٹی) کا خواب پورا ہوا۔ ملک میں ایک جولائی، 2017 سے جی ایس ٹی نافذ ہوا۔ اس کے نافذ ہونے کے بعد پورے ملک میں مختلف مصنوعات پر ٹیکس کی شرح ایک جیسی ہو گئی۔

انسالوینسی اینڈ بینک رپسی کوڈ:
قرض ادا نہیں کرنے والے بقایہ داروںسے مقررہ وقت کے اندر اندر بقایہ کی وصولی کے لئے جیٹلی انسالوینسی اینڈ بینک رپسی کوڈ لے کر آئے۔ سب سے پہلے یہ آرڈیننس21 دسمبر، 2015 کو شائع ہوا تھا۔ لوک سبھا اور راجیہ سبھا سے منظور ہونے کے بعد 28 مئی، 2016 کو یہ آرڈیننس نافذ ہوا تھا۔ اس آرڈیننس کے نافذ ہونے کے بعد بینکوں اور دیگر قرض دہندگان کو دیوالیہ کمپنیوں سے وصولی میں مدد مل رہی ہے۔ ایسے میں 28 فروری، 2019 تک اس قانون کے تحت دیوالیہ کمپنیوں سے 1.42 لاکھ کروڑ روپے کی وصولی ہو چکی ہے۔

نوٹ بندی کا اعلان:
ارون جیٹلی کے ہی دور میں ہی 8نومبر، 2016 کو وزیر اعظم نریندر مودی نے نوٹ بندی کا اعلان کیا تھا۔ اس کے تحت مودی نے ایک ہزار اور 500 روپے کے نوٹ کو بند کرنے کا اعلان کیا تھا۔ اس کے بعد پیدا ہوئی صورتحال سے سابق وزیر خزانہ جیٹلی نے بینکوں کے ساتھ تال میل کر حل کیا اور نوٹ بندی کو کامیاب بنایا۔

ڈائریکٹ کیش ٹرانسفر اسکیم:
ملک میں غریبوں کو فائدہ پہنچانے کے لئے کئی منصوبوں کے تحت سبسڈی دی جا رہی تھی، جس میں بدعنوانی کی بڑی شکایتیں تھیں۔ اس وقت کی منموہن حکومت نے سبسڈی میں ہورہی بدعنوانی کو روکنے کے لئے فائدہ اٹھانے والوں کو براہ راست بینک اکاؤنٹ میں سبسڈی کا پیسہ دینے کی منصوبہ بندی کی۔ اس منصوبہ بندی کو لاگو بھی کیا گیا لیکن اس کے موافق نتائج نہیں ملے۔ 2014 میں مودی حکومت بننے کے بعد ارون جیٹلی کی قیادت میں اس منصوبہ کو سختی سے لاگو کیا گیا۔ ملک میں آج تمام منصوبوں کی سبسڈی براہ راست فائدہ اٹھانے والوں کے بینک اکاؤنٹ میں ٹرانسفر کی جاتی ہے۔

وزیر اعظم جن دھن منصوبہ بندی:
جیٹلی کی مدت میں 28 اگست، 2014 کو وزیر اعظم نریندر مودی نے ملک کے تمام خاندانوں خاص طور پر دیہی علاقے کے خاندانوں تک بینک کاری خدمات پہنچانے کے مقصد سے وزیر اعظم جن دھن اسکیم شروع کی۔ اس منصوبہ کے تحت لوگوں کے گھر گھر جا کر بینک اکاؤنٹ کھولے گئے۔ اعداد و شمار کے مطابق، جن دھن یوجنا کے تحت اب تک قریب 33 کروڑ جن دھن اکاؤنٹ کھولے جا چکے ہیں۔ اس میں 50 فیصد سے زیادہ اکاؤنٹ خواتین کے ہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *