این آر سی میں نام نہیں آنے پر پرتیک ہجیلا کے خلاف ایف آئی آر درج

Share Article

 

ڈبروگڑھ (آسام)، گزشتہ 31 اگست کو جاری قومی شہری رجسٹر (این آر سی) کی آخری فہرست میں کافی ہندوستانی شہریوں کا نام شامل نہیں ہوا ہے۔ ریاست کے ڈبروگڑھ ضلع کے بھی کافی شہریوں کا نام این آر سی میں شامل نہیں کیا گیا ہے۔ ایسا ہی ایک خاندان ڈبروگڑھ ضلع کا ہے جس کے اراکین کا نام این آر سی کی آخری فہرست میں شامل ہے لیکن دو کے نام غائب ہیں۔ اس کو لے کر خاندان نے آسام ریاستی این آر سی کنوینر پرتیک ہجیلاکے خلاف ایف آئی آر درج کرائی ہے۔

اطلاع کے مطابق ڈبروگڑھ ضلع شہر کے شانتی پاڑہ میںواقع ایک خاندان کے ماں اور چھوٹے بیٹے کا نام این آر سی کی فہرست میں شامل ہو گیا ہے، جبکہ بڑے بیٹے اورمنجھلے بیٹے کا نام شامل نہیں ہوا ہے۔ اس سے ناراض خاندان کے بڑے بیٹے چندن مجومدار نے این آر سی کنوینر کے خلاف ایف آئی آر درج کرائی ہے۔

ذرائع کے مطابق چندن مجومدار کے خاندان کے تمام اراکین نے این آر سی کی درخواست کے دوران سال 1951 کی وراثت کے دستاویزات دستاویزات داخل کئے تھے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *