الور: 3 گھنٹے تک درندگی، رونگٹے کھڑے کر دے گی متاثرہ کی آپ بیتی

Share Article

 

راجستھان کے الور کی خواتین نے کبھی خواب میں بھی نہیں سوچا ہوگا کہ شوہر کے ساتھ شادی کی شاپنگ کرنے کا دن اس کی زندگی کا سب سے خوفناک دن بن جائے گا۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

26 اپریل کو الور کے تھانہغازی کے قریب میاں بیوی کو روک کر پانچ نوجوانوں نے گینگ ریپ کے واقعہ کو انجام دیا تھا۔ پولیس نے پانچوں ملزمان کو گرفتار کر لیا ہے۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

‘ٹائمز آف انڈیا سے بات چیت میں متاثرہ خاتون نے اس دن کی رونگٹے کھڑے کر دینے والی کہانی سنائی ہے۔ خاتون نے بتایا کہ اس نے جتنی مزاحمت کی، پانچوں نوجوانوں نے اسے اور اس کے شوہر کو اتنا ہی زیادہ پریشان کیا۔

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

گینگ ریپ قریب 3 گھنٹے تک چلتا رہا. ملزم یہیں نہیں رکے بلکہ ایک نے گینگ ریپ کے 11 ویڈیو بنا لئے تاکہ بلیک میلنگ کر کیش وصول جاسکے۔

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

متاثرہ خاتون کے دیور نے بتایا، میرا بھائی جے پور میں کام کرتا ہے اور اس کی بیوی تھانہ غازي میں اپنے والدین کے ساتھ رہتی ہے۔ 26 اپریل کو الور میں وہ شاپنگ کرنے گئے تھے. جب وہ اپنے موٹر سائیکل پر تھے تو پانچوں ملزم دو موٹرسايكل پر تھے اور سنسان سڑک پر ان کا پیچھا کرنے لگے۔ انہوں نے میرے بھائی کو روکنے پر مجبور کیا۔ اس کے بعد انہوں نے ان کی موٹر سائیکل سے گھسيٹ كر سڑک کے کنارے ویران علاقے میں لے گئے۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

اس کے بعد كپل کے کپڑے اتار دیے گئے اور ویڈیوز بنا لیا۔ انہوں نے میرے بھائی اور بھابھی کو ڈنڈوں سے پیٹا۔ بھابھی نے ان کو روکنے کی کوشش کی۔ لیکن اس نے جتنی مزاحمت کی انہوں نے اسے اتنا ہی پیٹا۔ اپنے شوہر کو بچانے کے لئے انہوں نے آخر کار خود کو سرینڈر کر دیا۔

وہ باری باری ان کا ریپ کرتے رہے اور یہ سب قریب 3 گھنٹے تک چلتا رہا۔ ملزمان نے كپل سے 2000 روپے بھی چھین لئے۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

متاثرہ کے دیور نے مزید بتایا، “میری بھابھی نے موٹر سائیکل کو دھکا دیا اور میرے بھائی نے کسی طرح كھڈے سے گاڑی نکالی۔ تشدد کے تین گھنٹوں کے بعد انہیں یہ سب کرنا پڑا۔ انہیں اپنی آپ بیتی بتانے میں 3 دن لگ گئے۔ دونوں بہت دنوں تک صدمے میں ہی تھے۔

پانچوں ملزمان میں سے ایک نے كپل کو بعد میں کال کر ان سے ریپ کے ویڈیو ڈیلیٹ کرنے کے بدلے 9000 روپے بھی مانگے۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو اپ لوڈ بھی کر دیا گیا تھا جو پیر کو وائرل ہو گیا تھا۔ خاتون نے بتایا کہ پہلے تو ایک بار انہوں نے پیسے دے دیے لیکن دوبارہ پولیس میں شکایت درج کرانے کا فیصلہ کیا۔

Image result for Alwar gang rape

متاثرہ خاتون کے شوہر نے کہا ‘میری آنکھوں کے سامنے 5 لوگوں نے باری باری میری بیوی کا ریپ کیا۔ ایک ملزم نے دوبارہ بھی ریپ کیا۔ وہ گینگ کے سردار کی طرح برتاؤ کر رہا تھا۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

پانچوں وحشيوں نے شوہر کے سامنے اس کی بیوی کے ساتھ ایک ایک کر کے گینگ ریپ کیا اور اس کا ویڈیو بھی بنا لیا۔ شوہر بار بار بیوی کو چھوڑنے کا مطالبہ لگا رہا تھا۔ مگر یہ وحشی ماننے کو تیار نہیں تھے۔ انہوں نے اسے ڈنڈوں سے پیٹتے جا رہے تھے۔

ان تینوں کے علاوہ ان پانچویں ساتھیوں نے جس نے نیلے رنگ کی ٹی شرٹ پہن رکھی ہے، لڑکی کو چھڑانے کی کوشش کی، مگر اس کے باقی ساتھیوں نے اس کی بات کو انسنا کر کے اسے ہی وہاں سے ہٹا دیا۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

تقریبا تین گھنٹے تک یہ وحشی بے بس لڑکی سے عصمت دری کرتے رہے اور جب انہیں لگا کہ انہیں زندہ چھوڑنا ان کے لئے خطرناک ہو سکتا ہے تو انہیں دھمکانے لگے کہ ویڈیو وائرل کر دیں گے۔ اتنا ہی نہیں جاتے جاتے پیسے بھی لے گئے اور ویڈیو وائرل نہ کرنے کے لئے 10 ہزار روپے بعد میں دینے کو بھی کہہ گئے۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

متاثرہ خاتون کے شوہر نے کہا، 26 اپریل کو ہمارے ساتھ جو ہوا، وہ کسی خوفناک خواب سے کم نہیں تھا۔ جب ویڈیو ہمارے پڑوس کے لوگوں کے درمیان پھیلنے لگا تو ہماری وقار بالکل ختم ہو گئی تھی۔ جب ہم نے پولیس کو اطلاع دی تو ان کی رائے بہت مایوس کرنے والی تھی۔

واردات کے بعد شوہر اور بیوی اس قدر حیران تھےکہ پولیس کے پاس جانے کے بجائے گھر جاکر خاموش بیٹھ گئے. پھر دو تین دن خاموش رہنے کے بعد شوہر اور بیوی نے طے کیا کہ وہ اب خاموش نہیں بیٹھیں گے اور ملزمان کو سزا دلا کر رہیں گے۔ تب جاکر کہیں یہ وحشیانہ گینگ ریپ کی واردات دنیا کے سامنے آئی۔

 

अलवर: 3 घंटे तक दरिंदगी, रोंगटे खड़े कर देगी पीड़िता की आपबीती

گرفتار ہو چکے ملزمان کے نام اشوک گوجر، مکیش گوجر اور اندرراج گوجر ہیں. اندرراج گوجر کو ٹرک ڈرائیور بتایا جا رہا ہے۔

پولیس کے مطابق، سوشل میڈیا پر ویڈیو کا اشتراک کرنے کے لئے مکیش گوجر ذمہ دار ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *