اداکارہ ارملا ماتونڈكر نے کانگریس سے دیا استعفیٰ، گروپ بندی کا لگایا الزام

Share Article

اداکارہ سے پوليٹشين بنیں ارملا ماتونڈكر نے کانگریس پارٹی سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ ممبئی کانگریس کی اندرونی گروپ بندی سے ناراض ارملا نے کہا کہ میری سیاسی اور سماجی جذبات بڑے مقصد کو حاصل کرنے کے لئے ہیں، لیکن ممبئی کانگریس کی اندرونی سیاست کی وجہ سے میں ایسا کر نہیں پا رہی ہوں۔

اداکارہ سے پوليٹشين بنیں ارملا ماتونڈكر نے کانگریس پارٹی سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ ممبئی کانگریس کی اندرونی گروپ بندی سے ناراض ارملا نے کہا کہ میری سیاسی اور سماجی جذبات بڑے مقصد کو حاصل کرنے کے لئے ہیں، لیکن ممبئی کانگریس کی اندرونی سیاست کی وجہ سے میں ایسا کر نہیں پا رہی ہوں۔

جاری بیان میں ارملا ماتونڈكر نے کہا کہ میں انڈین نیشنل کانگریس سے استعفیٰ دے چکی ہوں۔ میں نے پہلے ہی تب استعفیٰ کے بارے میں سوچنا شروع کر دیا جب میرے بار بار کی کوشش کے باوجود کوئی ایکشن نہیں لیا گیا اور بعد میں اس کے بعد کے ممبئی کانگریس کے اہم ملند دیوڑا کو خط لکھا تھا۔ بعد میں میرے خط کو لیک کر دیا گیا جو کہ خفیہ تھا۔ یہ میرے ساتھ دھوکہ تھا۔

ارملا نے کہا کہ کہنے کی ضرورت نہیں ہے کہ پارٹی میں کسی بھی شخص نے میرے بار بار کی مخالفت کے باوجود معافی نہیں مانگی۔ غور طلب ہے کہ ممبئی شمال میں کانگریس کے ناقص کارکردگی کے لئے خاص طور پر جن لوگوں کا میرے خط میں ذکر تھا، ان کے خلاف ان کے اعمال کے لئے کوئی کارروائی نہیں کی گئی بلکہ انہیں نئے عہدوں سے ہی نواز کیا گیا۔

تاہم یہ واضح ہے کہ ممبئی کانگریس کے اہم عہدیدار پارٹی کی بہتری کے لئے تنظیم میں تبدیلی اور تبدیلی لانے کے قابل نہیں ہیں۔ ممبئی کانگریس کی اندرونی گروپ بندی سے ناراض ارملا نے کہا کہ میری سیاسی اور سماجی جذبات بڑے مقصد کو حاصل کرنے کے لئے ہیں، لیکن ممبئی کانگریس کی اندرونی سیاست کی وجہ سے میں ایسا کر نہیں پا رہی ہوں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *