ایم سی ڈی انتخابات پر عام آدمی پارٹی نے کیا بیلیٹ پیپر سے ووٹنگ کرانے کا مطالبہ

Share Article

MCD-Electionنئی دہلی: پنجاب اور گووا میں متوقع کامیابی نہ ملنے کے ب عد عام آدمی پارٹی نے ای وی ایم یعنی الیکٹرانک ووٹنگ مشین پر شبہ ظاہر کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ آئندہ دہلی میونسپل کارپوریشن انتخابات میں بیلیٹ پیپر سے انتخابات کرائے جائیں۔ عام آدمی پارٹی کے سینئر لیڈر سنجے سنگھ نے کہا کہ یو پی میں بھی نگر پالیکا اور نگر نچایت کے انتخابات بیلیٹ پیپر سے ہوتے ہیں۔ دہلی ایم سی ڈی کے انتخابات بھی بیلیٹ پیپر سے کرائے جا سکتے ہیں۔ سنجے سنگھ نے کہا کہ پنجاب انتخابات جیتنے والی کانگریس کو بھی ای وی ایم پر شبہ ہے۔ بی ایس پی کو بھی شبہ ہے اور دوسری پارٹیوں کو بھی شبہ ہے ۔ یہی نہیں بی جے پی جب تک اپوزیشن میں تھی تب تک اس کے لیڈر اور حامی ای وی ایم پر سوال اٹھاتے تھے تو ایسی صورت میں بیلیٹ پیپر سے انتخابات کرانے میں کیا ہرج ہے۔

دہلی  میں عام آدمی پارٹی کی حکومت ہے اور میونسپل کارپوریشن کرانے کی ذمہ داری اس کی ہے لیکن اس کے لئے لیفٹیننٹ گورنر کی منظوری چاہئے ہوگی۔ دہلی میں اپریل، مئی کے مہینے میں تینوں میونسپل کارپوریشن میں انتخابات ہو سکتے ہیں۔

آپ کو بتا دیں کہ پنجاب انتخابات میں عام آدمی پارٹی کو 117 میں سے 22 سیٹیں ملیں جبکہ گووا میں 40 سیٹوں میں سے ایک بھی سیٹ پر اس کو جیت نہیں ملی اور اس کے سی ایم امیدوار تک انتخابات ہار گئے۔ جس کے دو دن بعد عام آدمی پارٹی نے ای وی ایم سے ہونے والے انتخابات پر سوال اٹھائے ہیں۔ حالانکہ اس سے پہلے بی ایس پی چیف مایاوتی نے گزشتہ سنیچر کو ای وی ایم پر سوال اٹھا کر دوبارہ بیلیٹ پیپر سے انتخابات کرانے کا مطالبہ کیا تھا جس کو الیکشن کمیشن نے خارج کر دیا تھا۔ یاد رہے کہ لالو پرساد یادو نے بھی ای وی ایم پر شبہ ظاہر کیا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *