ایک نوجوان نے دعویٰ کیا کہ وہ بالی ووڈ اداکارہ ایشوریہ رائے بچن کا بیٹا ہے، جانیں پورا معاملہ ہے کیا

Share Article

نئی دہلی: گزشتہ دنوں ایک خاتون نے گلوکارہ انورادھا پوڈوال کی بیٹی ہونے کا دعویٰ کیا تھا۔ اب ایک 22 سال کا نوجوان سامنے آیا ہے۔ اس نوجوان نے دعویٰ کیا ہے کہ وہ بالی ووڈ اداکارہ ایشوریہ رائے بچن کا بیٹا ہے۔ اس کا کہنا ہے کہ اس کی پیدائش 1998 میں ہوئی تھی۔ اس وقت ایشوریہ رائے 15 سال کی تھیں۔ اسپاٹ بوائے میں شائع خبر کے مطابق اس شخص کا نام سنگیت کمار ہے۔ اس نے ایک انٹرویو میں دعویٰ کیا ہے کہ ایشوریہ رائے اس کی ماں ہیں اور وہ آئی وی ایف (ان وٹرو فرٹلائزیشن) کے ذریعہ لندن میں پیدا ہوا ہے۔

View this post on Instagram

✨❤️✨😍🌟

A post shared by AishwaryaRaiBachchan (@aishwaryaraibachchan_arb) on

سنگیت کمارنےیہ بھی دعویٰ کیا ہےکہ ایشوریہ رائےکے والدین نے دو سال کی عمر تک اس کی دیکھ بھال کی ہے۔ اس کے بعد اس کے والد ویدی ویلو ریڈی اسے وشاکھا پٹنم لے آئے تھے۔ سنگیت کمارکا کہنا ہےکہ اس کے رشتہ داروں نے اس کی پیدائش سے متعلق تمام دستاویز ضائع کردیئےتھے۔ اگر یہ دستاویز ہوتے تو وہ ٹھوس دعویٰ کرپاتا۔ ایشوریہ رائے کا بیٹا ہونے کا دعویٰ کرنے والے سنگیت کمار کا کہنا ہے کہ وہ جلد ہی ممبئی میں اپنی ماں ایشوریہ رائے کے ساتھ شفٹ ہونا چاہتے ہیں۔

Image result for A young man claims that he is the son of Bollywood actress Aishwarya Rai Bachchan

واضح رہے کہ کچھ دن پہلے کیرل کی رہنے والی کرمالا موڈیکس نے نہ صرف خود انورادھا پوڈوال کی بایولوجیکل بیٹی بتائی، بلکہ اب انہوں نے بطور ثبوت یہ بھی بتایا ہے کہ ان کے والد ‘بہت پیار کرتے ہیں تم کو صنم’ گلوکارہ انورادھا ایک دوسرے کے بہت اچھے دوست ہیں۔ کرمالا کا دعویٰ ہے کہ ان کے پاس ان کے والد اور انورادھا پوڈوال کی دوستی کو لے کر ثبوت بھی ہیں۔

Image result for A young man claims that he is the son of Bollywood actress Aishwarya Rai Bachchan

کرمالا کا دعویٰ ہےکہ ان کی عمر 45 سال ہے۔ جبکہ بالی ووڈ گلوکارہ اس وقت 67 سال کی ہیں۔ انہیں اپنے انورادھا پوڈوال کی بیٹی ہونے کی بات کچھ وقت پہلے ہی پتہ چلی۔ ان کا کہنا ہےکہ جب ان کے والد آخری دنوں میں تھے تب انہوں نے کرمالا کو سچائی سے آگاہ کرایا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *