افغانستان میں مسافر بس سڑک کنارے بم سے ٹکرائی، 28 افراد ہلاک

Share Article

 

مغربی افغانستان میں مسافر بس کا سڑک کنارے بم سے ٹکر کے نتیجے میں خواتین اور بچوں سمیت درجنوں افراد ہلاک ہوگئے۔ یہ حملہ ایسے وقت میں سامنے آیا جب اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ افغانستان میں تشویشناک سطح پر شہری قتل ہورہے ہیں۔

 

میڈیا رپورٹ کے مطابق افغانستان کے صوبے فرا کے ترجمان محب اللہ محب کا کہنا تھا کہ ‘قدھار ہیرات ہائی وے پر مسافر بس طالبان کے سڑک کنارے بم سے ٹکرا گئی جس کی وجہ سے اب تک 28 افراد ہلاک اور 10 زخمی ہوگئے’۔

فرا کے گورنر کے ترجمان فاروق برکزئی کا کہنا تھا کہ دھماکے سے متاثرہ تمام افراد عام شہری تھے جس میں زیادہ تر خواتین اور بچے شامل تھے۔ انہوں نے ہلاکتوں کی تعداد کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ تعداد میں اضافہ بھی ہوسکتا ہے۔طالبان کی جانب سے تاحال حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی گئی۔خیال رہے کہ افغانستان میں 18 سال سے جاری جنگ کی وجہ سے ہزاروں شہریوں کو جان و مال کی قربانیاں دینی پڑی ہیں۔

گزشتہ روز اقوام متحدہ کی جانب سے رپورٹ جاری کی گئی جس میں بتایا گیا کہ 2019 کے پہلے 6 ماہ میں ہلاکتوں کی تعداد گزشتہ سال کے اس ہی عرصے کے دوران ہونے والی ہلاکتوں سے 27 فیصد کم ریکارڈ کی گئی۔رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا کہ امریکا اور افغان فورسز نے طالبان اور دیگر باغی تنظیموں سے زیادہ شہریوں کے قتل کیے ہیں۔افغانستان میں صدارتی انتخابات کے اعلان کے بعد سے خونریزی میں اضافہ ہوسکتا ہے۔اتوار کے روز انتخابی مہم کے پہلے دن ہی نائب صدر کے امیدوار امراللہ صالح کے کابل میں دفتر پر خودکش حملے اور فائرنگ سے 20 افراد ہلاک اور 50 زخمی ہوگئے تھے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *