ترکی کے دارالحکومت استنبول میں 5.8 شدت کے زلزلے کے نتیجے میں متعدد عمارتوں کو نقصان پہنچا تاہم کسی جانی نقصان کی اطلاع موصول نہیں ہوئی۔انقرہ کی سرکاری نیوز ایجنسی انادولو کے مطابق ڈیزاسٹر اینڈ ایمرجنسی مینجمنٹ نے بتایا کہ زلزلے کا مرکز بحیرہ مرمرہ تھا اور اس کی گھرائی زیر زمین 7 کلومیٹر تھی۔ادارے نے بتایا گیا کہ زلزلہ مقامی وقت کے مطابق دوپہر ایک بج کر 59 منٹ پر محسوس کیا گیا۔مقامی میڈیا کے مطابق ترکی کے صدر رجب طیب اردغان نے بتایا کہ زلزلے کے بعد 28 آفٹر شاکس ریکارڈ کیے گئے جس میں 8 لوگ زخمی ہوئے۔
اس ضمن میں مزید بتایا گیا کہ زلزلے کے جھٹکے استنبول سمیت قریبی اضلاع میں بھی محسوس کیے گئے تاہم وہاں بھی جانی نقصان کی کوئی اطلاع موصول نہیں ہوئی جبکہ استنبول میں آفٹر شاکس کے باعث لوگ تاحال خوفزدہ ہیں۔علاوہ ازیں زلزلے سے عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے اور متعدد عمارتوں کو جزوی نقصان پہچا جبکہ زلزلے سے ایک مسجد بھی متاثر ہوئی۔
واضح رہے کہ رواں برس مارچ میں بھی ترکی کے جنوب مغربی حصے میں 5.5 شدت کا زلزلہ آیا تھا جس میں 3 افراد زخمی ہوئے تھے۔زلزلے کا مرکز صوبے کے جنوبی حصے میں ضلع ایسی پایم میں 11.36 کلومیٹر گہرائی میں تھا۔
واضح رہے کہ گزشتہ روزپاکستان اور کشمیر میں زبر دست زلزلہ آیا تھا جس میں میرپور میں زلزلے سے کافی تباہی ہوئی اور 30 سے زائد افراد جاں بحق جبکہ سیکڑوں زخمی ہوگئے تھے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here