جموں و کشمیر سے 400 قیدی کئے جائیں گے ہریانہ شفٹ، جیلوں کی سیکورٹی بڑھائی گئی

Share Article

 

-70 جھجھر کی دلینا، 80 کرنال، 50 یمنانگر، 200 فرید آباد کی نیمکا جیل میں رکھے جائیں گے
-کرنال جیل میں اب تک شفٹ کئے گئے 61 قیدی

جموں و کشمیر کے 400 قیدیوں کو ہریانہ منتقل کرنے کے فیصلے کے بعد چار جیلوں کی سیکورٹی کو پہلے سے کہیں زیادہ چاق وچوبند کیا گیا ہے۔ جموں و کشمیر میں دفعہ 370 ختم ہونے کے بعد کئے گئے اس فیصلہ سے ہریانہ کی سرکاری مشینری حرکت میں آ گئی ہے۔ ہریانہ پولیس، ہریانہ انتظامیہ، جیل انتظامیہ اور خفیہ محکمہ کے سینئر افسران کی نظر اس عمل پر ہے۔

جموں و کشمیر سے منتقل ہونے والے ان قیدیوں کو جھجھر کی دلینا، فرید آباد کی نیمکا، کرنال، اور یمنانگر جیل میں رکھا جانا ہے۔ جھجھر کی دلہنا جیل میں 70، کرنال جیل میں 80، یمنانگر جیل میں 50 اور فرید آباد کی نیمکا جیل میں 200 قیدیوں کو رکھا جائے گا۔

اس فیصلے کے بعد جموں و کشمیر کی مختلف جیلوں سے کرنال منتقل کئے جانے والے 80 قیدیوں میں سے 61 کو منگل رات تک شفٹ بھی کیا جا چکا ہے۔

جھجھر کی دلینا جیل میں ان قیدیوں کو سخت سیکورٹی کے درمیان مختلف سیل میں رکھا جائے گا۔ دلینا جیل کے باہر کی حفاظت میں فوج کے جوانوں کو تعینات کیا گیا ہے۔ تقریبا ًڈیڑھ سال پہلے بھی کرنال اور دلینا جیل میں کشمیر سے کچھ قیدیوں کو شفٹ کیا گیا۔ ان میں تقریباً 12 قیدی اب بھی دلینا جیل میں بند ہیں۔

دلینا جیل سپرنٹنڈنٹ دیانند مندولا نے بتایا کہ، ہمیں سرکاری اطلاع مل چکی ہے۔ اس میں کہا گیا ہے کہ دلینا سمیت ریاست کی دیگر تین جیلوں میں جموں و کشمیر کے 400 قیدیوں کو شفٹ کیا جائے۔ ہم نے اپنے یہاں پوری تیاری کر لی ہے۔ دلینا جیل میں شفٹ ہونے والے جموں و کشمیر کے 70 قیدیوں کو دو سیل میں رکھا جائے گا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *