تیجسوی بھی چلیں گے مایاوتی کی راہ

Share Article

Tejashwi-Yadav

یوپی میں ایس پی اور بی ایس پی کے گٹھ بندھن نے بہار کی سیاسی سرگرمیوں پر بھی اثر ڈالا ہے۔کل تک 15سیٹ سے کم میں بات نہیں کرنے کا دعویٰ کرنے والی کانگریس کے لئے اب آٹھ سے دس سیٹوں کا انتظام بھی مشکل ہوگیا ہے۔تیجسوی یادؤ نے مایاوتی سے ملاقات کرکے انہیں گوپال گنج کی سیٹ کا آفر دیا ہے۔اس میں یو پی کے بارڈر سے متصل بہار کے علاقہ میں ایک سیٹ کا اضافہ بھی ہوسکتا ہے۔جانکار بتاتے ہیں8 کہ مایاوتی اور اکھلیش یادو سے ملاقات کرنے کے بعد اتنا تو طے ہوہی گیا ہے کہ کانگریس کی حیثیت بہار میں اب پہلے والی نہیں رہنے والی ہے۔تیجسوی یادو نے اب کانگریس کو سستے میں نپٹانے کا موٹے طور پر من بنا لیا ہے۔اگر کانگریس نہیں مانی تو بھر تیجسوی مایاوتی والا فارمولہ بھی لاگو کر سکتے ہیں ۔کانگریس کو لیکر آر جے ڈی کو کچھ دقت اننت سنگھ اور پپویادو جیسے امیدواروں کو لیکر آرہی ہے۔تیجسوی یادو نے ان دونوں کو نہ کہہ رکھا ہے لیکن یہ دونوں کانگریس کے سہارے دہلی کا ٹکٹ چاہ رہے ہیں۔دونوں کے تئیں کانگریس کی ہمدردی ہے۔اب لولی آنند بھی کانگریس کے ذریعہ شیوہر سیٹ پر دعویٰ ٹھوک رہی ہے۔ایسے میں تیجسوی یادو نے مایاوتی اور اکھیلیش یادو سے کانگریس کو نپٹانے کے لئے منتر لے لیا ہے۔اس لئے یہ طے ہے کہ آنے والے دن کانگریس کے لئے مشکل تر ہونے والے ہیں۔

 

 

 

 

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *