افسوسناک:ماہواری نے لے لی ماں اوراس کے دوبیٹوں کی جان

Share Article
نیپال کی ایک خاتون کوصرف اسلئے گھرسے باہرجھونپڑی میں سوناپڑا،کیونکہ اسے ماہواری ہورہی تھی۔وجہ تھی ماہواری کے دوران خاتون کواچھوت ماننا۔35سال کی یہ خاتون اس ٹھنڈ میں اپنے دوبیٹوں کے ساتھ بندجھونپڑی میں سوئی۔اپنے بچوں کوٹھنڈ سے بچانے کیلئے اس نے آگ جلائی لیکن رات ہوتے ہوتے آگ کے دھوئیں سے دم گھٹنے کی وجہ سے نہ صرف اس خاتون کی بلکہ اس اس کے بیٹوں کی بھی موت ہوگئی۔
کاٹھمنڈو پوسٹ کی خبرکے مطابق، یہ واقعہ نیپال کے باجوراضلع کا ہے جہاں ماہواری کے باعث انبابوہرا نامی خاتون کی موت ہوئی۔انباماہواری کے چوتھے دن 8جنوری کی رات کواپنے 9اور12سال کے بیٹوں کے ساتھ کھانا کھانے کے بعد جھونپڑی سونے چلی گئی۔جھونپڑی کوگرم رکھنے کیلئے اس نے آگ جلالی تھی۔
جھونپڑی میں نہ توکھڑکی تھی اورنہ ہی ہوانکلنے کاکوئی دوسرا راستہ۔اگلی صبح جب انبا کی ساس نے جھونپڑی کا دروازہ کھولا تواسے تینوں مردہ ملے۔سبھی کی آگ لگنے کے باعث دم گھٹنے سے مو ت ہوگئی تھی ۔چیف ضلع آفیسر چیتراج برال نے بتایاکہ لاشوں کوپوسٹ مارٹم کیلئے بھیجاگیاہے۔معاملے کی جانچ کیلئے اعلیٰ افسران کوجائے وقوع پربھیجاگیاہے۔نیپال میں کئی کمیونٹی کے لوگ رواج کے نام پرماہواری والی خواتین کوناپاک مانتے ہیں اورانہیں مہینے میں ایک بارماہواری کے دنوں میں خاندان سے دور جھونپڑیوں میں رہنے کیلئے مجبورکیاجاتاہے۔اس رواج پرپابندی لگائے جانے کے باوجود اب بھی یہ چلن میں ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *