اردو اکادمی، دہلی کے تعلیمی و ثقافتی مقابلے جاری

urdu
اردو اکادمی، دہلی دہلی کے اسکولوں کے طلباء و طالبات میں تعلیم کا ذوق و شوق پیدا کرنے اور ان میں مسابقت کا جذبہ پیدا کرنے کے لیے ہر سال تعلیمی مقابلے منعقد کرتی ہے۔ ان مقابلوں میں اول، دوم اور سوم آنے والے طلباء و طالبات کو انعام دیتی ہے اور طلبا و طالبات کی حوصلہ افزائی کے لیے کنسولیشن انعام بھی دیتی ہے۔ ان مقابلوں میں تقریری ، فی البدیہہ تقریری، بیت بازی ، اردو ڈراما، غزل سرائی، کوئز( سوال و جواب) اورمضمون نویسی و خطوط نویسی مقابلے شامل ہیں۔ یہ تعلیمی مقابلے دہلی کے پرائمری تا سینئر سیکنڈری اردو اسکولوں کے طلباء و طالبات کے درمیان منعقد ہوتے ہیں۔
آج صبح دس بجے مضمون نویسی و خطوط نویسی کا مقابلہ برائے پرائمری، مڈل، سیکنڈری و سینئر سیکنڈری زمرہ منعقد کیا گیا ۔ جس میں48 اسکولوں سے255 طلبا و طالبات نے مقابلہ میں حصہ لیا۔ اس مقابلے کے نتائج سے اسکولوں کو بعد میں مطلع کیا جائے گا۔
دوپہر تین بجے کوئز (سوال و جواب) مقابلہ برائے مڈل زمرہ منعقد کیا گیا جس میں بطور کوئز ماسٹر ریشما فاروقی اور مشاہد کی حیثیت سے اکادمی کی گورننگ کونسل کے رکن اور سینٹ اسٹیفن کالج کے استاد ڈاکٹر شمیم احمد اور غالب اکیڈمی کے سکریٹری ڈاکٹر عقیل احمد نے شرکت کی۔ اس مقابلے میں رابعہ گرلز پبلک اسکول گلی قاسم جان کو پہلے انعام کا مستحق قرار دیا گیا اور دوسرے انعام کے لیے نیوہورائزن پبلک اسکول اور جامعہ مڈل اسکول کو مستحق قرار دیا گیا جب کہ تیسرے انعام کے لیے اینگلو عربک سینئر سیکنڈری اسکول کو مستحق قرار دیا گیا اور حوصلہ افزائی انعام کے لیے کریسنٹ اسکول موجپور کو مستحق قرار دیا گیا۔ ان کے علاوہ طلبا کی بہتر کارکردگی پر علقمہ حیدر ولد شفیع حیدر(جامعہ مڈل اسکول) اور طالب ولد محمد فیض( اینگلو عربک سینئر سیکنڈری اسکول) کو انفرادی انعام کے لیے منتخب کیا گیا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *