بلندشہرتشدد:انسپکٹرسبودھ سنگھ کے اہل خانہ سے ملے وزیراعلیٰ یوگی

subodh-kumars-family
اترپردیش کے بلندشہرمیں گؤکشی کے شک کے بعد ہجومی تشدد میں پولس انسپکٹر سبودھ کمارسنگھ کی موت ہوگئی تھی۔بلند شہرتشدد میں مارے گئے انسپکٹرسبودھ کمارسنگھ کے اہل خانہ نے جمعرات کو وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ سے ملاقات کی۔ پولس انسپکٹرسبودھ کمارکے قتل کے تین دن بعد وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے لکھنؤ میں رہائش گاہ پران کے اہل خانہ سے ملاقات کی۔ملاقات کے دوران انسپکٹرکی اہلیہ ، دوبیٹے اوران کی بہن ودیگر افراد موجود رہے۔ملاقات کے بعد انسپکٹر کے بیٹے نے بتایاکہ وزیراعلیٰ جی نے بھروسہ دیاہے کہ انہیں انصاف ملے گا۔قصورواروں کوسخت سے سخت سزاملے گی۔انہوں نے کہاکہ وہ ہمارے خاندان کے ساتھ ہیں۔آپ کوبتادیں کہ پیر کے روز بلند شہر میں تشدد کے دوران دو افراد کی موت ہو گئی تھی جس میں پولیس انسپکٹر سبودھ کمار سنگھ بھی شامل تھے۔
متاثرہ خاندان – سی ایم یوگی کے ساتھ ملاقات کے بعد یوپی کے ڈی جی پی اوپی سنگھ نے پریس کانفرنس کی۔ پریس کانفرنس میں ڈی جی پی نے کہاکہ’’ متاثرہ خاندان کو50لاکھ روپے کی مدد رقم دی جائے گی ۔بچوں کی پڑھائی کیلئے جوبینک سے لون لیاگیاہے، وہ رقم بھی سرکار کی طرف دی جائے گی۔یہ بھی کہاگیاہے کہ خاندان کے ایک رکن کونوکری ، ساتھی ہی پنشن بھی دی جائے گی۔پولس کا مکھیا ہونے کے ناطے وعدہ کیاہے کہ دونوں بچوں کوانفارمل وے میں بھی مدد دی جائے گی۔سبودھ سنگھ کا خواب تھاکہ وہ ریٹائرمنٹ کے بعد اسکول بنائیں گے ۔ کالج کانام بھی سبودھ سنگھ کے نام پررکھاجائے گا۔سبودھ سنگھ کے اوپر تعلیم اورمکان کا لون ہے، وہ سرکارکی طرف سے چکایا جائے گا‘‘۔
سرکارکی طرف سے کہاگیاہے کہ سبودھ کمارسنگھ کا بڑابیٹا سول سروس اورچھوٹا بیٹا وکالت کی پڑھائی کررہاہے۔ان کی پڑھائی میں سرکارمددکرے گی۔وہیں ان کے علاقے میں سڑک کا نام سبودھ سنگھ کے نام پراوران کے پرہی کالج بنایاجائے گا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *