ریسرچ اسکالر عبدالباری قاسمی نائب صدرکے ہاتھوں گولڈ میڈل اور مرزا غالب ایوارڈ سے سرفراز

abdul-bari
دہلی یونیورسٹی شعبہ اردوکے ریسرچ اسکالر اور ’قندیل ‘کے ایڈیٹرعبدالباری قاسمی کو دہلی یونیورسٹی کے 95ویں تقسیم اسنادتقریب کے موقع پر نائب صدر جمہوریہ ہند ایم وینکیا نائیڈو کے ہاتھوں گولڈ میڈل اور مرزا غالب ایوارڈ سے سرفراز کیا گیا۔یہ ایوارڈ اور گولڈ میڈل انہیں ایم اے اردو میں دہلی یونیورسٹی میں سب سے زیادہ نمبرات حاصل کرنے کی وجہ سے دیا گیاہے ۔واضح رہے کہ عبدالباری قاسمی کا تعلق صوبہ بہار کے ضلع سمستی پور سے ہے ، ان کی ابتدائی تعلیم جامعہ قاسمیہ مدرسہ شاہی مرادآباد سے ہوئی، اس کے بعدثانوی سے لے کر فضیلت تک کی تعلیم دارالعلوم دیوبند میں حاصل کی، انھوں نے مولانا آزاد نیشنل اردویونیورسٹی حیدرآباد سے بی اے اور ماس کمیونیکیشن اینڈ جرنلزم کی تعلیم حاصل کرنے کے بعد شعبہ اردو دہلی یونیورسٹی میں ایم اے میں داخلہ لیا اور اعزازی نمبرات سے کامیابی حاصل کی موصوف فی الحال دہلی یونیورسٹی کے شعبہ اردو میں ریسرچ اسکالر ہیں،ان کے علمی، ادبی، تنقیدی، سیاسی وسماجی مضامین ومقالات ملک کے مختلف رسائل واخبارات میں شائع ہوتے رہتے ہیں اورفی الحال تنقیدی مضامین پرمشتمل ان کی ایک کتاب بھی زیرِ طبع ہے۔
اس اہم ترین اعزاز حاصل کرنے پر شعبہ اردو دہلی یونیورسٹی کے اساتذہ، طلبہ اور ان کے احباب ومتعلقین نے انھیں مبارکباد دیتے ہوئے مستقبل کے لیے مزیدکامیابیوں اورنیک خواہشات کااظہارکیاہے ۔مبارکباد دینے والوں میں ان کے والد عمر فاروق،معروف عالم دین وایم پی مولانا اسرارالحق قاسمی،تعلیمی وملی فاؤنڈیشن کے سکریٹری مولانانوشیراحمد، مرکزی جمعیت علماکے جنرل سکریٹری مولانا فیروز اخترقاسمی، مفتی اختر امام عادل ،شعبہ اردو دہلی یونیورسٹی کے اساتذہ بطور خاص پروفیسر ابن کنول، ڈاکٹر علی جاوید، ڈاکٹر ابوبکر عباد، ڈاکٹر ارشاد نیازی،ڈاکٹر متھن کمار ،مولانا سعید انور قاسمی،صحافی وسماجی کارکن شاہنوازبدرقاسمی، امانت اللہ قاسمی،ارشادعالم قاسمی،قندیل کے چیف ایڈیٹر نایاب حسن ومینجنگ ایڈیٹرابواللیث قاسمی ،ڈاکٹر افضل قاسمی بنگلور ،ابولکلام قاسمی پٹنہ، ڈاکٹر جسیم الدین دہلی یونیورسٹی ،انوارالحق روزنامہ سہاراکے نام خاص طورپرقابلِ ذکرہیں ۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *